Search hadith by
Hadith Book
Search Query
Search Language
English Arabic Urdu
Search Type Basic    Case Sensitive
 

Sahih Bukhari

Afflictions and the End of the World

كتاب الفتن

حَدَّثَنَا أَبُو الْيَمَانِ، أَخْبَرَنَا شُعَيْبٌ، عَنِ الزُّهْرِيِّ، أَخْبَرَنِي عُبَيْدُ اللَّهِ بْنُ عَبْدِ اللَّهِ بْنِ عُتْبَةَ بْنِ مَسْعُودٍ، أَنَّ أَبَا سَعِيدٍ، قَالَ حَدَّثَنَا رَسُولُ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم يَوْمًا حَدِيثًا طَوِيلاً عَنِ الدَّجَّالِ، فَكَانَ فِيمَا يُحَدِّثُنَا بِهِ أَنَّهُ قَالَ ‏"‏ يَأْتِي الدَّجَّالُ وَهُوَ مُحَرَّمٌ عَلَيْهِ أَنْ يَدْخُلَ نِقَابَ الْمَدِينَةِ، فَيَنْزِلُ بَعْضَ السِّبَاخِ الَّتِي تَلِي الْمَدِينَةَ، فَيَخْرُجُ إِلَيْهِ يَوْمَئِذٍ رَجُلٌ وَهْوَ خَيْرُ النَّاسِ أَوْ مِنْ خِيَارِ النَّاسِ، فَيَقُولُ أَشْهَدُ أَنَّكَ الدَّجَّالُ الَّذِي حَدَّثَنَا رَسُولُ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم حَدِيثَهُ، فَيَقُولُ الدَّجَّالُ أَرَأَيْتُمْ إِنْ قَتَلْتُ هَذَا ثُمَّ أَحْيَيْتُهُ، هَلْ تَشُكُّونَ فِي الأَمْرِ فَيَقُولُونَ لاَ‏.‏ فَيَقْتُلُهُ ثُمَّ يُحْيِيهِ فَيَقُولُ وَاللَّهِ مَا كُنْتُ فِيكَ أَشَدَّ بَصِيرَةً مِنِّي الْيَوْمَ‏.‏ فَيُرِيدُ الدَّجَّالُ أَنْ يَقْتُلَهُ فَلاَ يُسَلَّطُ عَلَيْهِ ‏"‏‏.‏


Chapter: Ad-Dajjal will not be able to enter Al-Madina

Narrated Abu Sa`id: One day Allah's Messenger (PBUH) narrated to us a long narration about Ad-Dajjal and among the things he narrated to us, was: "Ad-Dajjal will come, and he will be forbidden to enter the mountain passes of Medina. He will encamp in one of the salt areas neighboring Medina and there will appear to him a man who will be the best or one of the best of the people. He will say 'I testify that you are Ad-Dajjal whose story Allah's Messenger (PBUH) has told us.' Ad-Dajjal will say (to his audience), 'Look, if I kill this man and then give him life, will you have any doubt about my claim?' They will reply, 'No,' Then Ad- Dajjal will kill that man and then will make him alive. The man will say, 'By Allah, now I recognize you more than ever!' Ad-Dajjal will then try to kill him (again) but he will not be given the power to do so." ھم سے ابوالیمان نے بیان کیا ، کھا ھم کو شعیب نے خبر دی ، انھیں زھری نے ، انھیں عبیداللھ بن عبداللھ بن عتبھ بن مسعود نے خبر دی ، ان سے ابوسعید رضی اللھ عنھ نے بیان کیا کھ ایک دن رسول کریم صلی اللھ علیھ وسلم نے ھم سے دجال کے متعلق ایک طویل حدیث بیان کی ۔ آنحضرت صلی اللھ علیھ وسلم کے ارشادات میں یھ بھی تھا کھ آپ نے فرمایا دجال آئے گا اور اس کے لیے ناممکن ھو گا کھ مدینھ کی گھاٹیوں میں داخل ھو ۔ چنانچھ وھ مدینھ منورھ کے قریب کسی شور والی زمین پر قیام کرے گا ۔ پھر اس دن اس کے پاس ایک مرد مومن جائے گا اور وھ افضل ترین لوگوں میں سے ھو گا ۔ اور اس سے کھے گا کھ میں گواھی دیتا ھوں اس بات کی جو رسول کریم صلی اللھ علیھ وسلم نے ھم سے بیان فرمایا تھا ۔ اس پر دجال کھے گا کیا تم دیکھتے ھو اگر میں اسے قتل کر دوں اور پھر زندھ کروں تو کیا تمھیں میرے معاملھ میں شک و شبھ باقی رھےگا ؟ اس کے پاس والے لوگ کھیں گے کھ نھیں چنانچھ وھ اس صاحب کو قتل کر دے گا اور پھر اسے زندھ کر دے گا ۔ اب وھ صاحب کھیں گے کھ واللھ ! آج سے زیادھ مجھے تیرے معاملے میں پھلے اتنی بصیرت حاصل نھ تھی ۔ اس پر دجال پھر انھیں قتل کرنا چاھے گا لیکن اس مرتبھ اسے مار نھ سکے گا ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 92 Hadith no 7132
Web reference: Sahih Bukhari Volume 9 Book 88 Hadith no 246


حَدَّثَنَا عَبْدُ اللَّهِ بْنُ مَسْلَمَةَ، عَنْ مَالِكٍ، عَنْ نُعَيْمِ بْنِ عَبْدِ اللَّهِ الْمُجْمِرِ، عَنْ أَبِي هُرَيْرَةَ، قَالَ قَالَ رَسُولُ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم ‏"‏ عَلَى أَنْقَابِ الْمَدِينَةِ مَلاَئِكَةٌ، لاَ يَدْخُلُهَا الطَّاعُونُ وَلاَ الدَّجَّالُ ‏"‏‏.‏

Narrated Abu Huraira: Allah's Messenger (PBUH) said, "There are angels at the mountain passes of Medina (so that) neither plague nor Ad-Dajjal can enter it.' ھم سے عبداللھ بن مسلمھ نے بیان کیا ، ان سے امام مالک نے بیان کیا ، ان سے نعیم بن عبداللھ بن المجمر نے بیان کیا ، اور ان سے ابوھریرھ رضی اللھ عنھ نے بیان کیا کھ رسول کریم صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا مدینھ منورھ کے راستوں پر فرشتے پھرھ دیتے ھیں نھ یھاں طاعون آ سکتی ھے اور نھ دجال آ سکتا ھے ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 92 Hadith no 7133
Web reference: Sahih Bukhari Volume 9 Book 88 Hadith no 247


حَدَّثَنِي يَحْيَى بْنُ مُوسَى، حَدَّثَنَا يَزِيدُ بْنُ هَارُونَ، أَخْبَرَنَا شُعْبَةُ، عَنْ قَتَادَةَ، عَنْ أَنَسِ بْنِ مَالِكٍ، عَنِ النَّبِيِّ صلى الله عليه وسلم قَالَ ‏"‏ الْمَدِينَةُ يَأْتِيهَا الدَّجَّالُ، فَيَجِدُ الْمَلاَئِكَةَ يَحْرُسُونَهَا، فَلاَ يَقْرَبُهَا الدَّجَّالُ ـ قَالَ ـ وَلاَ الطَّاعُونُ، إِنْ شَاءَ اللَّهُ ‏"‏‏.‏

Narrated Anas bin Malik: The Prophet (PBUH) said, "Ad-Dajjal will come to Medina and find the angels guarding it. So Allah willing, neither Ad-Dajjal, nor plague will be able to come near it." مجھ سے یحییٰ بن موسیٰ نے بیان کیا ، انھوں نے کھا ھم سے یزید بن ھارون نے بیان کیا ، انھوں نے کھا ھم کو شعبھ نے خبر دی ، انھیں قتادھ نے ، انھیں انس بن مالک رضی اللھ عنھ نے کھ نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا دجال مدینھ تک آئے گا تو یھاں فرشتوں کو اس کی حفاظت کرتے ھوئے پائے گا ۔ چنانچھ نھ دجال اس کے قریب آ سکتا ھے اور نھ طاعون ، انشاءاللھ ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 92 Hadith no 7134
Web reference: Sahih Bukhari Volume 9 Book 88 Hadith no 248


حَدَّثَنَا أَبُو الْيَمَانِ، أَخْبَرَنَا شُعَيْبٌ، عَنِ الزُّهْرِيِّ، ح وَحَدَّثَنَا إِسْمَاعِيلُ، حَدَّثَنِي أَخِي، عَنْ سُلَيْمَانَ، عَنْ مُحَمَّدِ بْنِ أَبِي عَتِيقٍ، عَنِ ابْنِ شِهَابٍ، عَنْ عُرْوَةَ بْنِ الزُّبَيْرِ، أَنَّ زَيْنَبَ ابْنَةَ أَبِي سَلَمَةَ، حَدَّثَتْهُ عَنْ أُمِّ حَبِيبَةَ بِنْتِ أَبِي سُفْيَانَ، عَنْ زَيْنَبَ ابْنَةِ جَحْشٍ، أَنَّ رَسُولَ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم دَخَلَ عَلَيْهَا يَوْمًا فَزِعًا يَقُولُ ‏"‏ لاَ إِلَهَ إِلاَّ اللَّهُ، وَيْلٌ لِلْعَرَبِ مِنْ شَرٍّ قَدِ اقْتَرَبَ، فُتِحَ الْيَوْمَ مِنْ رَدْمِ يَأْجُوجَ وَمَأْجُوجَ مِثْلُ هَذِهِ ‏"‏‏.‏ وَحَلَّقَ بِإِصْبَعَيْهِ الإِبْهَامِ وَالَّتِي تَلِيهَا‏.‏ قَالَتْ زَيْنَبُ ابْنَةُ جَحْشٍ فَقُلْتُ يَا رَسُولَ اللَّهِ أَفَنَهْلِكُ وَفِينَا الصَّالِحُونَ قَالَ ‏"‏ نَعَمْ إِذَا كَثُرَ الْخُبْثُ ‏"‏‏.‏


Chapter: Ya’juj and Ma’juj

Narrated Zainab bint Jahsh: That one day Allah's Messenger (PBUH) entered upon her in a state of fear and said, "None has the right to be worshipped but Allah! Woe to the Arabs from the Great evil that has approached (them). Today a hole has been opened in the dam of Gog and Magog like this." The Prophet (PBUH) made a circle with his index finger and thumb. Zainab bint Jahsh added: I said, "O Alllah's Apostle! Shall we be destroyed though there will be righteous people among us?" The Prophet (PBUH) said, "Yes, if the (number) of evil (persons) increased." ھم سے ابوالیمان نے بیان کیا ، کھا ھم کو شعیب نے خبر دی ، انھیں زھری نے ، ( دوسری سند ) اور امام بخاری نے کھا کھ ھم سے اسماعیل بن ابی اویس نے بیان کیا ، کھا مجھ سے میرے بھائی عبدالحمید نے ، ان سے سلیمان بن بلال نے ، ان سے محمد بن ابی عتیق نے ، ان سے ابن شھاب نے ، ان سے عروھ بن زبیر نے ، ان سے زینب بنت ابی سلمھ نے بیان کیا ، ان سے ام حبیبھ بنت ابی سفیان رضی اللھ عنھم نے اور ان سے زینب بنت جحش رضی اللھ عنھا نے کھ ایک دن رسول کریم صلی اللھ علیھ وسلم ان کے پاس گھبرائے ھوئے داخل ھوئے ، آپ فرما رھے تھے کھ تباھی ھے ۔ عربوں کے لیے اس برائی سے جو قریب آ چکی ھے ۔ آج یاجوج و ماجوج کی دیوار سے اتنا کھل گیا ھے اور آپ نے اپنے انگوٹھے اور اس کی قریب والی انگلی کو ملا کر ایک حلقھ بنایا ۔ اتنا سن کر زینب بن جحش رضی اللھ عنھا نے بیان کیا کھ میں نے عرض کیا یا رسول اللھ ! تو کیا ھم اس کے باوجود ھلاک ھو جائیں گے کھ ھم میں نیک صالح لوگ بھی زندھ ھوں گے ؟ آنحضرت صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا کھ ھاں جب برائی بھت بڑھ جائے گی ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 92 Hadith no 7135
Web reference: Sahih Bukhari Volume 9 Book 88 Hadith no 249


حَدَّثَنَا مُوسَى بْنُ إِسْمَاعِيلَ، حَدَّثَنَا وُهَيْبٌ، حَدَّثَنَا ابْنُ طَاوُسٍ، عَنْ أَبِيهِ، عَنْ أَبِي هُرَيْرَةَ، عَنِ النَّبِيِّ صلى الله عليه وسلم قَالَ ‏"‏ يُفْتَحُ الرَّدْمُ رَدْمُ يَأْجُوجَ وَمَأْجُوجَ مِثْلَ هَذِهِ ‏"‏‏.‏ وَعَقَدَ وُهَيْبٌ تِسْعِينَ‏.‏

Narrated Abu Huraira: The Prophet (PBUH) said, "A hole has been opened in the dam of Gog and Magog." Wuhaib (the sub-narrator) made the number 90 (with his index finger and thumb). ھم سے موسیٰ بن اسماعیل نے بیان کیا ، کھا ھم سے وھیب بن خالد نے بیان کیا ، ان سے عبداللھ بن طاؤس نے بیان کیا ، ان سے ان کے والد نے اور ان سے ابوھریرھ رضی اللھ عنھ نے کھ نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا ” سد “ یعنی یاجوج و ماجوج کی دیوار اتنی کھل گئی ھے ۔ وھیب نے نوے کا اشارھ کر کے بتلایا ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 92 Hadith no 7136
Web reference: Sahih Bukhari Volume 9 Book 88 Hadith no 250



@2019 Copyrights: if you have any objection regarding any shared content on pdf9.com please click here.