Search hadith by
Hadith Book
Search Query
Search Language
English Arabic Urdu
Search Type Basic    Case Sensitive
 

Sahih Bukhari

Fighting for the Cause of Allah (Jihaad)

كتاب الجهاد والسير

حَدَّثَنَا أَبُو مَعْمَرٍ، حَدَّثَنَا عَبْدُ الْوَارِثِ، قَالَ حَدَّثَنِي يَحْيَى بْنُ أَبِي إِسْحَاقَ، عَنْ أَنَسِ بْنِ مَالِكٍ ـ رضى الله عنه ـ قَالَ كُنَّا مَعَ النَّبِيِّ صلى الله عليه وسلم مَقْفَلَهُ مِنْ عُسْفَانَ، وَرَسُولُ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم عَلَى رَاحِلَتِهِ، وَقَدْ أَرْدَفَ صَفِيَّةَ بِنْتَ حُيَىٍّ، فَعَثَرَتْ نَاقَتُهُ فَصُرِعَا جَمِيعًا، فَاقْتَحَمَ أَبُو طَلْحَةَ فَقَالَ يَا رَسُولَ اللَّهِ، جَعَلَنِي اللَّهُ فِدَاءَكَ‏.‏ قَالَ ‏"‏ عَلَيْكَ الْمَرْأَةَ ‏"‏‏.‏ فَقَلَبَ ثَوْبًا عَلَى وَجْهِهِ وَأَتَاهَا، فَأَلْقَاهَا عَلَيْهَا وَأَصْلَحَ لَهُمَا مَرْكَبَهُمَا فَرَكِبَا، وَاكْتَنَفْنَا رَسُولَ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم، فَلَمَّا أَشْرَفْنَا عَلَى الْمَدِينَةِ قَالَ ‏"‏ آيِبُونَ تَائِبُونَ عَابِدُونَ لِرَبِّنَا حَامِدُونَ ‏"‏‏.‏ فَلَمْ يَزَلْ يَقُولُ ذَلِكَ حَتَّى دَخَلَ الْمَدِينَةَ‏.‏

Narrated Anas bin Malik: We were in the company of the Prophet (PBUH) while returning from 'Usfan, and Allah's Messenger (PBUH) was riding his she-camel keeping Safiya bint Huyay riding behind him. His she-camel slipped and both of them fell down. Abu Talha jumped from his camel and said, "O Allah's Messenger (PBUH)! May Allah sacrifice me for you." The Prophet (PBUH) said, "Take care of the lady." So, Abu Talha covered his face with a garment and went to Safiya and covered her with it, and then he set right the condition of their shecamel so that both of them rode, and we were encircling Allah's Messenger (PBUH) like a cover. When we approached Medina, the Prophet (PBUH) said, "We are returning with repentance and worshipping and praising our Lord." He kept on saying this till he entered Medina. ھم سے ابو معمر نے بیان کیا ‘ کھا ھم سے عبدالوارث نے بیان کیا ‘ کھا کھ مجھ سے یحییٰ بن ابی اسحاق نے بیان کیا ‘ اور ان سے انس بن مالک رضی اللھ عنھ نے بیان کیاکھ ( غزوھ بنو لحیان میں جو 6 ھ میں ھوا ) عسفان سے واپس ھوتے ھوئے ھم رسول اللھ صلی اللھ علیھ وسلم کے ساتھ تھے ۔ آپ اپنی اونٹنی پر سوار تھے اور آپ نے سواری پر پیچھے ( ام المؤمنین ) حضرت صفیھ بنت حیی رضی اللھ عنھا کو بٹھایا تھا ۔ اتفاق سے آپ کی اونٹنی پھسل گئی اور آپ دونوں گر گئے ۔ یھ حال دیکھ کر ابوطلحھ رضی اللھ عنھ بھی فوراً اپنی سواری سے کود پڑے اور کھا ‘ یا رسول اللھ ! اللھ مجھے آپ پر قربان کرے ‘ کچھ چوٹ تو نھیں لگی ؟ آنحضرت صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا پھلے عورت کی خبر لو ۔ ابوطلحھ رضی اللھ عنھ نے ایک کپڑا اپنے چھرے پر ڈال لیا ‘ پھر حضرت صفیھ رضی اللھ عنھا کے قریب آئے اور وھی کپڑا ان کے اوپر ڈال دیا ۔ اس کے بعد دونوں کی سواری درست کی ‘ جب آپ سوار ھو گئے تو ھم آنحضرت صلی اللھ علیھ وسلم کے چاروں طرف جمع ھو گئے ۔ پھر جب مدینھ دکھائی دینے لگا تو آنحضرت صلی اللھ علیھ وسلم نے یھ دعا پڑھی ۔ ” ھم اللھ کی طرف واپس ھونے والے ھیں ۔ توبھ کرنے والے ‘ اپنے رب کی عبادت کرنے والے اور اس کی حمد پڑھنے والے ھیں ‘‘ ۔ آنحضرت صلی اللھ علیھ وسلم یھ دعا برابر پڑھتے رھے یھاں تک کھ مدینھ میں داخل ھو گئے ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 56 Hadith no 3085
Web reference: Sahih Bukhari Volume 4 Book 52 Hadith no 318


حَدَّثَنَا عَلِيٌّ، حَدَّثَنَا بِشْرُ بْنُ الْمُفَضَّلِ، حَدَّثَنَا يَحْيَى بْنُ أَبِي إِسْحَاقَ، عَنْ أَنَسِ بْنِ مَالِكٍ ـ رضى الله عنه أَنَّهُ أَقْبَلَ هُوَ وَأَبُو طَلْحَةَ مَعَ النَّبِيِّ صلى الله عليه وسلم وَمَعَ النَّبِيِّ صلى الله عليه وسلم صَفِيَّةُ مُرْدِفَهَا عَلَى رَاحِلَتِهِ، فَلَمَّا كَانُوا بِبَعْضِ الطَّرِيقِ عَثَرَتِ النَّاقَةُ، فَصُرِعَ النَّبِيُّ صلى الله عليه وسلم وَالْمَرْأَةُ، وَإِنَّ أَبَا طَلْحَةَ ـ قَالَ أَحْسِبُ قَالَ ـ اقْتَحَمَ عَنْ بَعِيرِهِ فَأَتَى رَسُولَ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم فَقَالَ يَا نَبِيَّ اللَّهِ جَعَلَنِي اللَّهُ فِدَاءَكَ، هَلْ أَصَابَكَ مِنْ شَىْءٍ قَالَ ‏"‏ لاَ، وَلَكِنْ عَلَيْكَ بِالْمَرْأَةِ ‏"‏‏.‏ فَأَلْقَى أَبُو طَلْحَةَ ثَوْبَهُ عَلَى وَجْهِهِ، فَقَصَدَ قَصْدَهَا فَأَلْقَى ثَوْبَهُ عَلَيْهَا، فَقَامَتِ الْمَرْأَةُ، فَشَدَّ لَهُمَا عَلَى رَاحِلَتِهِمَا فَرَكِبَا، فَسَارُوا حَتَّى إِذَا كَانُوا بِظَهْرِ الْمَدِينَةِ ـ أَوْ قَالَ أَشْرَفُوا عَلَى الْمَدِينَةِ ـ قَالَ النَّبِيُّ صلى الله عليه وسلم ‏"‏ آيِبُونَ تَائِبُونَ عَابِدُونَ لِرَبِّنَا حَامِدُونَ ‏"‏‏.‏ فَلَمْ يَزَلْ يَقُولُهَا حَتَّى دَخَلَ الْمَدِينَةَ‏.‏

Narrated Anas bin Malik: That he and Abu Talha came in the company of the Prophet (PBUH) and Safiya was accompanying the Prophet, who let her ride behind him on his she-camel. During the journey, the she-camel slipped and both the Prophet (PBUH) and (his) wife fell down. Abu Talha (the sub-narrator thinks that Anas said that Abu Talha jumped from his camel quickly) said, "O Allah's Messenger (PBUH)! May Allah sacrifice me for your sake! Did you get hurt?" The Prophet (PBUH) replied,"No, but take care of the lady." Abu Talha covered his face with his garment and proceeded towards her and covered her with his garment, and she got up. He then set right the condition of their she-camel and both of them (i.e. the Prophet (PBUH) and his wife) rode and proceeded till they approached Medina. The Prophet (PBUH) said, "We are returning with repentance and worshipping and praising our Lord." The Prophet (PBUH) kept on saying this statement till he entered Medina. ھم سے علی بن عبداللھ مدینی نے بیان کیا ‘ کھا ھم سے بشر بن مفضل نے بیان کیا ‘ کھا ھم سے یحییٰ بن ابی اسحاق نے بیان کیا اور ان سے انس بن مالک رضی اللھ عنھ نے بیان کیا کھ وھ اور ابوطلحھ رضی اللھ عنھ نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم کے ساتھ تھے ، ام المؤمنین حضرت صفیھ رضی اللھ عنھا کو آنحضرت صلی اللھ علیھ وسلم نے اپنی سواری پر پیچھے بٹھا رکھا تھا ۔ راستے میں اتفاق سے آپ کی اونٹنی پھسل گئی اور آنحضرت صلی اللھ علیھ وسلم گر گئے اور ام المؤمنین بھی گر گئیں ۔ ابوطلحھ رضی اللھ عنھ نے یوں کھا کھ میں سمجھتا ھوں ‘ انھوں نے اپنے آپ کو اونٹ سے گرا دیا اور آنحضرت صلی اللھ علیھ وسلم کے قریب پھنچ کر عرض کیا ‘ اے اللھ کے رسول ! اللھ مجھے آپ پر قربان کرے کوئی چوٹ تو حضور کو نھیں آئی ؟ آپ صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا کھ نھیں لیکن تم عورت کی خبر لو ۔ چنانچھ انھوں نے ایک کپڑا اپنے چھرے پر ڈال لیا ‘ پھر ام المؤمنین کی طرف بڑھے اور وھی کپڑا ان پر ڈال دیا ۔ اب ام المؤمنین کھڑی ھو گئیں ۔ پھر ابوطلحھ رضی اللھ عنھ نے آپ دونوں کے لئے اونٹنی کو مضبوط کیا ۔ تو آپ سوار ھوئے اور سفر شروع کیا ۔ جب مدینھ منورھ کے سامنے پھنچ گئے یا راوی نے یھ کھا کھ جب مدینھ دکھائی دینے لگا تو نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم نے یھ دعا پڑھی ۔ ” ھم اللھ کی طرف لوٹنے والے ھیں ۔ توبھ کرنے والے ‘ اپنے رب کی عبادت کرنے والے اور اس کی تعریف کرنے والے ھیں ! آپ صلی اللھ علیھ وسلم یھ دعا برابر پڑھتے رھے ‘ یھاں تک کی مدینھ میں داخل ھو گئے ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 56 Hadith no 3086
Web reference: Sahih Bukhari Volume 4 Book 52 Hadith no 319


حَدَّثَنَا سُلَيْمَانُ بْنُ حَرْبٍ، حَدَّثَنَا شُعْبَةُ، عَنْ مُحَارِبِ بْنِ دِثَارٍ، قَالَ سَمِعْتُ جَابِرَ بْنَ عَبْدِ اللَّهِ، رضى الله عنهما قَالَ كُنْتُ مَعَ النَّبِيِّ صلى الله عليه وسلم فِي سَفَرٍ فَلَمَّا قَدِمْنَا الْمَدِينَةَ قَالَ لِي ‏"‏ ادْخُلِ الْمَسْجِدَ فَصَلِّ رَكْعَتَيْنِ ‏"‏‏.‏


Chapter: The performance of Salat on returning from a journey

Narrated Jabir bin `Abdullah: I was on a journey in the company of the Prophet (PBUH) and when we reached Medina, he said to me, "Enter the Mosque and offer two rak`at." ھم سے سلیمان بن حرب نے بیان کیا ‘ انھوں نے کھا ھم سے شعبھ نے بیان کیا ‘ ان سے محارب بن دثار نے بیان کیا ‘ انھوں نے کھا کھ میں نے جابر بن عبداللھ انصاری رضی اللھ عنھما سے سنا ‘ انھوں نے بیان کیا کھ میں نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم کے ساتھ ایک سفر میں تھا ۔ جب ھم مدینھ پھنچے تو آپ نے فرمایا کھ پھلے مسجد میں جا اور دو رکعت ( نفل ) نماز پڑھ ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 56 Hadith no 3087
Web reference: Sahih Bukhari Volume 4 Book 52 Hadith no 320


حَدَّثَنَا أَبُو عَاصِمٍ، عَنِ ابْنِ جُرَيْجٍ، عَنِ ابْنِ شِهَابٍ، عَنْ عَبْدِ الرَّحْمَنِ بْنِ عَبْدِ اللَّهِ بْنِ كَعْبٍ، عَنْ أَبِيهِ، وَعَمِّهِ، عُبَيْدِ اللَّهِ بْنِ كَعْبٍ عَنْ كَعْبٍ ـ رضى الله عنه ـ أَنَّ النَّبِيَّ صلى الله عليه وسلم كَانَ إِذَا قَدِمَ مِنْ سَفَرٍ ضُحًى دَخَلَ الْمَسْجِدَ، فَصَلَّى رَكْعَتَيْنِ قَبْلَ أَنْ يَجْلِسَ‏.‏

Narrated Ka`b: Whenever the Prophet (PBUH) returned from a journey in the forenoon, he would enter the Mosque and offer two rak`at before sitting. ھم سے ابو عاصم نے بیان کیا ‘ انھوں نے کھا ھم سے ابن جریج نے بیان کیا ‘ ان سے ابن شھاب نے ‘ ان سے عبدالرحمٰن بن عبداللھ بن کعب نے ‘ ان سے ان کے والد ( عبداللھ ) اور چچا عبیداللھ بن کعب رضی اللھ عنھ نے بیان کیا کھ نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم جب دن چڑھے سفر سے واپس ھوتے تو بیٹھنے سے پھلے مسجد میں جا کر دو رکعت نفل نماز پڑھتے تھے ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 56 Hadith no 3088
Web reference: Sahih Bukhari Volume 4 Book 52 Hadith no 321


حَدَّثَنِي مُحَمَّدٌ، أَخْبَرَنَا وَكِيعٌ، عَنْ شُعْبَةَ، عَنْ مُحَارِبِ بْنِ دِثَارٍ، عَنْ جَابِرِ بْنِ عَبْدِ اللَّهِ ـ رضى الله عنهما أَنَّ رَسُولَ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم لَمَّا قَدِمَ الْمَدِينَةَ نَحَرَ جَزُورًا أَوْ بَقَرَةً‏.‏ زَادَ مُعَاذ عَنْ شُعْبَةَ عَنْ مُحَارِبٍ سَمِعَ جَابِرَ بْنَ عَبْدِ اللَّهِ اشْتَرَى مِنى النَّبِيُّ صلى الله عليه وسلم بَعِيرًا بِوَقِيَّتَيْنِ وَدِرْهَمٍ أَوْ دِرْهَمَيْنِ، فَلَمَّا قَدِمَ صِرَارًا أَمَرَ بِبَقَرَةٍ فَذُبِحَتْ فَأَكَلُوا مِنْهَا، فَلَمَّا قَدِمَ الْمَدِينَةَ أَمَرَنِي أَنْ آتِيَ الْمَسْجِدَ فَأُصَلىَ رَكْعَتَيْنِ، وَوَزَنَ لِي ثَمَنَ الْبَعِيرِ‏.‏

Narrated Muharib bin Dithar: Jabir bin `Abdullah said, "When Allah's Messenger (PBUH) arrived at Medina, he slaughtered a camel or a cow." Jabir added, "The Prophet (PBUH) bought a camel from me for two Uqiyas (of gold) and one or two Dirhams. When he reached Sirar, he ordered that a cow be slaughtered and they ate its meat. When he arrived at Medina, he ordered me to go to the Mosque and offer two rak`at, and weighed (and gave) me the price of the camel." ھم سے محمد بن سلام نے بیان کیا ‘ کھا ھم کو وکیع نے خبر دی ‘ انھیں شعبھ نے ‘ انھیں محارب بن دثار نے اور انھیں جابر بن عبداللھ رضی اللھ عنھ نے کھ نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم جب مدینھ تشریف لائے ( غزوھ تبوک یا ذات الرقاع سے ) تو اونٹ یا گائے ذبح کی ( راوی کو شبھ ھے ) معاذ عنبری نے ( اپنی روایت میں ) کچھ زیادتی کے ساتھ کھا ۔ ان سے شعبھ نے بیان کیا ‘ ان سے محارب بن دثار نے ‘ انھوں نے جابر بن عبداللھ رضی اللھ عنھ سے سنا کھ نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم نے مجھ سے اونٹ خریدا تھا ۔ دو اوقیھ اور ایک درھم یا ( راوی کو شبھ ھے کھ دواوقیھ ) دو درھم میں ۔ جب آپ مقام صرار پر پھنچے تو آپ نے حکم دیا اور گائے ذبح کی گئی اور لوگوں نے اس کا گوشت کھایا ۔ پھر جب آپ مدینھ منورھ پھنچے تو مجھے حکم دیا کھ پھلے مسجد میں جا کر دو رکعت نماز پڑھوں ‘ اس کے بعد مجھے میرے اونٹ کی قیمت وزن کر کے عنایت فرمائی ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 56 Hadith no 3089
Web reference: Sahih Bukhari Volume 4 Book 52 Hadith no 322


حَدَّثَنَا أَبُو الْوَلِيدِ، حَدَّثَنَا شُعْبَةُ، عَنْ مُحَارِبِ بْنِ دِثَارٍ، عَنْ جَابِرٍ، قَالَ قَدِمْتُ مِنْ سَفَرٍ فَقَالَ النَّبِيُّ صلى الله عليه وسلم ‏"‏ صَلِّ رَكْعَتَيْنِ ‏"‏‏.‏ صِرَارٌ مَوْضِعٌ نَاحِيَةً بِالْمَدِينَةِ‏.‏

Narrated Jabir: Once I returned from a journey and the Prophet (PBUH) said (to me) "Offer two rak`at." (Sirar is a place near Medina). ھم سے ابو الولید نے بیان کیا ‘ کھا ھم س شعبھ نے بیان کیا ‘ ان سے محارب بن دثار نے اور ان سے جابر بن عبداللھ رضی اللھ عنھ نے بیان کیا کھ میں سفر سے واپس مدینھ پھنچا تو آنحضرت صلی اللھ علیھ وسلم نے مجھے حکم دیا کھ مسجد میں جا کر دو رکعت نفل نماز پڑھوں ‘ صرار ( مدینھ منورھ سے تین میل کے فاصلے پر مشرق میں ) ایک جگھ کا نام ھے ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 56 Hadith no 3090
Web reference: Sahih Bukhari Volume 4 Book 52 Hadith no 323



@2019 Copyrights: if you have any objection regarding any shared content on pdf9.com please click here.