Search hadith by
Hadith Book
Search Query
Search Language
English Arabic Urdu
Search Type Basic    Case Sensitive
 

Sahih Bukhari

Hajj (Pilgrimage)

كتاب الحج

حَدَّثَنَا مُحَمَّدُ بْنُ أَبِي بَكْرٍ الْمُقَدَّمِيُّ، حَدَّثَنَا فُضَيْلُ بْنُ سُلَيْمَانَ، قَالَ حَدَّثَنِي مُوسَى بْنُ عُقْبَةَ، قَالَ أَخْبَرَنِي كُرَيْبٌ، عَنْ عَبْدِ اللَّهِ بْنِ عَبَّاسٍ ـ رضى الله عنهما ـ قَالَ انْطَلَقَ النَّبِيُّ صلى الله عليه وسلم مِنَ الْمَدِينَةِ، بَعْدَ مَا تَرَجَّلَ وَادَّهَنَ وَلَبِسَ إِزَارَهُ وَرِدَاءَهُ، هُوَ وَأَصْحَابُهُ، فَلَمْ يَنْهَ عَنْ شَىْءٍ مِنَ الأَرْدِيَةِ وَالأُزْرِ تُلْبَسُ إِلاَّ الْمُزَعْفَرَةَ الَّتِي تَرْدَعُ عَلَى الْجِلْدِ، فَأَصْبَحَ بِذِي الْحُلَيْفَةِ، رَكِبَ رَاحِلَتَهُ حَتَّى اسْتَوَى عَلَى الْبَيْدَاءِ، أَهَلَّ هُوَ وَأَصْحَابُهُ وَقَلَّدَ بَدَنَتَهُ، وَذَلِكَ لِخَمْسٍ بَقِينَ مِنْ ذِي الْقَعْدَةِ، فَقَدِمَ مَكَّةَ لأَرْبَعِ لَيَالٍ خَلَوْنَ مِنْ ذِي الْحَجَّةِ، فَطَافَ بِالْبَيْتِ وَسَعَى بَيْنَ الصَّفَا وَالْمَرْوَةِ، وَلَمْ يَحِلَّ مِنْ أَجْلِ بُدْنِهِ لأَنَّهُ قَلَّدَهَا، ثُمَّ نَزَلَ بِأَعْلَى مَكَّةَ عِنْدَ الْحَجُونِ، وَهْوَ مُهِلٌّ بِالْحَجِّ، وَلَمْ يَقْرَبِ الْكَعْبَةَ بَعْدَ طَوَافِهِ بِهَا حَتَّى رَجَعَ مِنْ عَرَفَةَ، وَأَمَرَ أَصْحَابَهُ أَنْ يَطَّوَّفُوا بِالْبَيْتِ وَبَيْنَ الصَّفَا وَالْمَرْوَةِ، ثُمَّ يُقَصِّرُوا مِنْ رُءُوسِهِمْ ثُمَّ يَحِلُّوا، وَذَلِكَ لِمَنْ لَمْ يَكُنْ مَعَهُ بَدَنَةٌ قَلَّدَهَا، وَمَنْ كَانَتْ مَعَهُ امْرَأَتُهُ فَهِيَ لَهُ حَلاَلٌ، وَالطِّيبُ وَالثِّيَابُ‏.‏

Narrated `Abdullah bin `Abbas: The Prophet (PBUH) with his companions started from Medina after combing and oiling his hair and putting on two sheets of lhram (upper body cover and waist cover). He did not forbid anyone to wear any kind of sheets except the ones colored with saffron because they may leave the scent on the skin. And so in the early morning, the Prophet (PBUH) mounted his Mount while in Dhul-Hulaifa and set out till they reached Baida', where he and his companions recited Talbiya, and then they did the ceremony of Taqlid (which means to put the colored garlands around the necks of the Budn (camels for sacrifice). And all that happened on the 25th of Dhul-Qa'da. And when he reached Mecca on the 4th of Dhul-Hijja he performed the Tawaf round the Ka`ba and performed the Tawaf between Safa and Marwa. And as he had a Badana and had garlanded it, he did not finish his Ihram. He proceeded towards the highest places of Mecca near Al-Hujun and he was assuming the Ihram for Hajj and did not go near the Ka`ba after he performed Tawaf (round it) till he returned from `Arafat. Then he ordered his companions to perform the Tawaf round the Ka`ba and then the Tawaf of Safa and Marwa, and to cut short the hair of their heads and to finish their Ihram. And that was only for those people who had not garlanded Budn. Those who had their wives with them were permitted to contact them (have sexual intercourse), and similarly perfume and (ordinary) clothes were permissible for them. ھم سے محمد بن ابی بکر مقدمی نے بیان کیا ، کھا کھ ھم سے فضیل بن سلیمان نے بیان کیا ، کھا کھ ھم سے موسیٰ بن عقبھ نے بیان کیا ، کھا کھ مجھے کریب نے خبر دی اور ان سے عبداللھ بن عباس رضی اللھ عنھمانے بیان کیا کھ حجتھ الوداع میں ظھر اور عصر کے درمیان ھفتھ کے دن نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم کنگھا کرنے اور تیل لگانے اور ازار اور رداء پھننے کے بعد اپنے صحابھ کے ساتھ مدینھ سے نکلے ۔ آپ صلی اللھ علیھ وسلم نے اس وقت زعفران میں رنگے ھوئے ایسے کپڑے کے سوا جس کا رنگ بدن پر لگتا ھو کسی قسم کی چادر یا تھبند پھننے سے منع نھیں کیا ۔ دن میں آپ صلی اللھ علیھ وسلم ذوالحلیفھ پھنچ گئے ( اور رات وھیں گزاری ) پھر آپ صلی اللھ علیھ وسلم سوار ھوئے اور بیداء سے آپ صلی اللھ علیھ وسلم نے اور آپ صلی اللھ علیھ وسلم کے ساتھیوں نے لبیک کھا اور احرام باندھا اور اپنے اونٹوں کو ھار پھنایا ۔ ذی قعدھ کے مھینے میں اب پانچ دن رھ گئے تھے پھر جب آپ صلی اللھ علیھ وسلم مکھ پھنچے تو ذی الحجھ کے چار دن گزر چکے تھے ۔ آپ صلی اللھ علیھ وسلم نے بیت اللھ کا طواف کیا اور صفا اور مروھ کی سعی کی ، آپ صلی اللھ علیھ وسلم ابھی حلال نھیں ھوئے کیونکھ قربانی کے جانور آپ صلی اللھ علیھ وسلم کے ساتھ تھے اور آپ صلی اللھ علیھ وسلم نے ان کی گردن میں ھار ڈال دیا تھا ۔ آپ صلی اللھ علیھ وسلم حجون پھاڑ کے نزدیک مکھ کے بالائی حصھ میں اترے ۔ حج کا احرام اب بھی باقی تھا ۔ بیت اللھ کے طواف کے بعد پھر آپ صلی اللھ علیھ وسلم وھاں اس وقت تک تشریف نھیں لے گئے جب تک میدان عرفات سے واپس نھ ھو لیے ۔ آپ صلی اللھ علیھ وسلم نے اپنے ساتھیوں کو حکم دیا تھا کھ وھ بیت اللھ کا طواف کریں اور صفا و مروھ کے درمیان سعی کریں ، پھر اپنے سروں کے بال ترشوا کر حلال ھو جائیں ۔ یھ فرمان ان لوگوں کے لیے تھا جن کے ساتھ قربانی کے جانور نھیں تھے ۔ اگر کسی کے ساتھ اس کی بیوی تھی تو وھ اس سے ھمبستر ھو سکتا تھا ۔ اسی طرح خوشبودار اور ( سلے ھوئے ) کپڑے کا استعمال بھی اس کے لیے جائز تھا ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 25 Hadith no 1545
Web reference: Sahih Bukhari Volume 2 Book 26 Hadith no 617


حَدَّثَنِي عَبْدُ اللَّهِ بْنُ مُحَمَّدٍ، حَدَّثَنَا هِشَامُ بْنُ يُوسُفَ، أَخْبَرَنَا ابْنُ جُرَيْجٍ، حَدَّثَنَا مُحَمَّدُ بْنُ الْمُنْكَدِرِ، عَنْ أَنَسِ بْنِ مَالِكٍ ـ رضى الله عنه ـ قَالَ صَلَّى النَّبِيُّ صلى الله عليه وسلم بِالْمَدِينَةِ أَرْبَعًا، وَبِذِي الْحُلَيْفَةِ رَكْعَتَيْنِ، ثُمَّ بَاتَ حَتَّى أَصْبَحَ بِذِي الْحُلَيْفَةِ، فَلَمَّا رَكِبَ رَاحِلَتَهُ وَاسْتَوَتْ بِهِ أَهَلَّ‏.‏

Narrated Anas bin Malik: The Prophet (PBUH) offered four rak`at in Medina and then two rak`at at Dhul Hulaifa and then passed the night at Dhul-Hulaifa till it was morning and when he mounted his Mount and it stood up, he started to recite Talbiya. ھم سے عبداللھ بن محمد مسندی نے بیان کیا ، انھوں نے کھا کھ ھم سے ھشام بن یوسف نے بیان کیا ، انھوں نے کھا کھ مجھے ابن جریج نے خبر دی ، انھوں نے کھا کھ مجھ سے محمد بن المنکدر نے بیان کیا اور ان سے انس بن مالک رضی اللھ عنھ نے بیان کیا ، انھوں نے کھا کھ نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم نے مدینھ میں چار رکعتیں پڑھیں لیکن ذوالحلیفھ میں دو رکعت ادا فرمائیں پھر آپ صلی اللھ علیھ وسلم نے رات وھیں گزاری ۔ صبح کے وقت جب آپ صلی اللھ علیھ وسلم اپنی سواری پر سوار ھوئے تو آپ صلی اللھ علیھ وسلم نے لبیک پکاری ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 25 Hadith no 1546
Web reference: Sahih Bukhari Volume 2 Book 26 Hadith no 618


حَدَّثَنَا قُتَيْبَةُ، حَدَّثَنَا عَبْدُ الْوَهَّابِ، حَدَّثَنَا أَيُّوبُ، عَنْ أَبِي قِلاَبَةَ، عَنْ أَنَسِ بْنِ مَالِكٍ ـ رضى الله عنه ـ أَنَّ النَّبِيَّ صلى الله عليه وسلم صَلَّى الظُّهْرَ بِالْمَدِينَةِ أَرْبَعًا، وَصَلَّى الْعَصْرَ بِذِي الْحُلَيْفَةِ رَكْعَتَيْنِ، قَالَ وَأَحْسِبُهُ بَاتَ بِهَا حَتَّى أَصْبَحَ‏.‏

Narrated Abu Qilaba: Anas bin Malik said, "The Prophet (PBUH) offered four rak`at of the Zuhr prayer in Medina and two rak`at of `Asr prayer at Dhul-Hulaifa." I think that the Prophet (PBUH) passed the night there till morning. ھم سے قتیبھ بن سعید نے بیان کیا ، کھا کھ ھم سے عبدالوھاب نے بیان کیا ، کھ ھم سے ایوب سختیانی نے بیان کیا ، ان سے ابوقلابھ نے اور ان سے انس بن مالک نے کھ رسول اللھ صلی اللھ علیھ وسلم نے مدینھ میں ظھر چار رکعت پڑھی لیکن ذوالحلیفھ میں عصر دو رکعت ۔ انھوں نے کھا کھ میرا خیال ھے کھ رات صبح تک آپ صلی اللھ علیھ وسلم نے ذولحلیفھ میں ھی گزار دی ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 25 Hadith no 1547
Web reference: Sahih Bukhari Volume 2 Book 26 Hadith no 619


حَدَّثَنَا سُلَيْمَانُ بْنُ حَرْبٍ، حَدَّثَنَا حَمَّادُ بْنُ زَيْدٍ، عَنْ أَيُّوبَ، عَنْ أَبِي قِلاَبَةَ، عَنْ أَنَسٍ ـ رضى الله عنه ـ قَالَ صَلَّى النَّبِيُّ صلى الله عليه وسلم بِالْمَدِينَةِ الظُّهْرَ أَرْبَعًا، وَالْعَصْرَ بِذِي الْحُلَيْفَةِ رَكْعَتَيْنِ، وَسَمِعْتُهُمْ يَصْرُخُونَ بِهِمَا جَمِيعًا‏.‏


Chapter: Talbiya is to be recited aloud

Narrated Anas: The Prophet (PBUH) offered four rak`at of the Zuhr prayer in Medina and two rak`at of the `Asr prayer in Dhul-Hulaifa and I heard them (the companions of the Prophet) reciting Talbiya together loudly to the extent of shouting. ھم سے سلیمان بن حرب نے بیان کیا ، کھا کھ ھم سے حماد بن زید نے بیان کیا ، ان سے ابوایوب نے ، ان سے ابوقلابھ نے اور ان سے انس بن مالک نے کھ نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم نے نماز ظھر مدینھ منورھ میں چار رکعت پڑھی ۔ لیکن نماز عصر ذوالحلیفھ میں دو رکعت پڑھی ۔ میں نے خود سنا کھ لوگ بلند آواز سے حج اور عمرھ دونوں کے لیے لبیک کھھ رھے تھے ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 25 Hadith no 1548
Web reference: Sahih Bukhari Volume 2 Book 26 Hadith no 620


حَدَّثَنَا عَبْدُ اللَّهِ بْنُ يُوسُفَ، أَخْبَرَنَا مَالِكٌ، عَنْ نَافِعٍ، عَنْ عَبْدِ اللَّهِ بْنِ عُمَرَ ـ رضى الله عنهما ـ أَنَّ تَلْبِيَةَ، رَسُولِ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم لَبَّيْكَ اللَّهُمَّ لَبَّيْكَ، لَبَّيْكَ لاَ شَرِيكَ لَكَ لَبَّيْكَ، إِنَّ الْحَمْدَ وَالنِّعْمَةَ لَكَ وَالْمُلْكَ، لاَ شَرِيكَ لَكَ‏.‏


Chapter: The Talbiya

Narrated `Abdullah bin `Umar: The Talbiya of Allah's Messenger (PBUH) was : 'Labbaika Allahumma labbaik, Labbaika la sharika Laka labbaik, Inna-l-hamda wan-ni'mata Laka walmulk, La sharika Laka' (I respond to Your call O Allah, I respond to Your call, and I am obedient to Your orders, You have no partner, I respond to Your call All the praises and blessings are for You, All the sovereignty is for You, And You have no partners with you. ھم سے عبداللھ بن یوسف تنیسی نے بیان کیا ، انھوں نے کھا کھ ھمیں امام مالک نے خبر دی ، انھیں نافع نے اور انھیں عبداللھ بن عمر رضی اللھ عنھما نے کھ رسول اللھ صلی اللھ علیھ وسلم کا تلبیھ یھ تھا «لبيك اللهم لبيك ،‏‏‏‏ لبيك لا شريك لك لبيك ،‏‏‏‏ إن الحمد والنعمة لك والملك ،‏‏‏‏ لا شريك لك‏» ” حاضر ھوں اے اللھ ! حاضر ھوں میں ، تیرا کوئی شریک نھیں ۔ حاضر ھوں ، تمام حمد تیرے ھی لیے ھے اور تمام نعمتیں تیری ھی طرف سے ھیں ، بادشاھت تیری ھی ھے تیرا کوئی شریک نھیں ۔ “

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 25 Hadith no 1549
Web reference: Sahih Bukhari Volume 2 Book 26 Hadith no 621


حَدَّثَنَا مُحَمَّدُ بْنُ يُوسُفَ، حَدَّثَنَا سُفْيَانُ، عَنِ الأَعْمَشِ، عَنْ عُمَارَةَ، عَنْ أَبِي عَطِيَّةَ، عَنْ عَائِشَةَ ـ رضى الله عنها ـ قَالَتْ إِنِّي لأَعْلَمُ كَيْفَ كَانَ النَّبِيُّ صلى الله عليه وسلم يُلَبِّي لَبَّيْكَ اللَّهُمَّ لَبَّيْكَ، لَبَّيْكَ لاَ شَرِيكَ لَكَ لَبَّيْكَ، إِنَّ الْحَمْدَ وَالنِّعْمَةَ لَكَ‏.‏ تَابَعَهُ أَبُو مُعَاوِيَةَ عَنِ الأَعْمَشِ‏.‏ وَقَالَ شُعْبَةُ أَخْبَرَنَا سُلَيْمَانُ، سَمِعْتُ خَيْثَمَةَ، عَنْ أَبِي عَطِيَّةَ، سَمِعْتُ عَائِشَةَ ـ رضى الله عنها ـ‏.‏

Narrated `Aisha: I know how the Prophet (PBUH) used to say (Talbiya) and it was: 'Labbaika Allahumma Labbaik, Labbaika la sharika Laka labbaik, Inna-l-hamda wan-ni'mata Laka walmu Lk, La sharika Laka'. ھم سے محمدبن یوسف فریابی نے بیان کیا ، کھا کھ ھم سے سفیان ثوری نے اعمش سے بیان کیا ، ان سے عمارھ نے ان سے ابوعطیھ نے اور ان سے عائشھ رضی اللھ عنھا نے کھ میں جانتی ھوں کھ کس طرف نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم تلبیھ کھتے تھے ۔ آپ صلی اللھ علیھ وسلم تلبیھ یوں کھتے تھے «لبيك اللهم لبيك ،‏‏‏‏ لبيك لا شريك لك لبيك ،‏‏‏‏ إن الحمد والنعمة لك‏» ( ترجمھ گزر چکا ھے ) اس کی متابعت سفیان ثوری کی طرح ابومعاویھ نے اعمش سے بھی کی ھے ۔ اور شعبھ نے کھا کھ مجھ کو سلیمان اعمش نے خبر دی کھ میں نے خیثمھ سے سنا اور انھوں نے ابوعطیھ سے ، انھوں نے حضرت عائشھ رضی اللھ عنھا سے سنا ۔ پھر یھی حدیث بیان کی ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 25 Hadith no 1550
Web reference: Sahih Bukhari Volume 2 Book 26 Hadith no 622



@2019 Copyrights: if you have any objection regarding any shared content on pdf9.com please click here.