Search hadith by
Hadith Book
Search Query
Search Language
English Arabic Urdu
Search Type Basic    Case Sensitive
 

Sahih Bukhari

Hajj (Pilgrimage)

كتاب الحج

حَدَّثَنَا مُوسَى بْنُ إِسْمَاعِيلَ، حَدَّثَنَا وُهَيْبٌ، حَدَّثَنَا أَيُّوبُ، عَنْ أَبِي قِلاَبَةَ، عَنْ أَنَسٍ ـ رضى الله عنه ـ قَالَ صَلَّى رَسُولُ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم وَنَحْنُ مَعَهُ بِالْمَدِينَةِ الظُّهْرَ أَرْبَعًا، وَالْعَصْرَ بِذِي الْحُلَيْفَةِ رَكْعَتَيْنِ، ثُمَّ بَاتَ بِهَا حَتَّى أَصْبَحَ، ثُمَّ رَكِبَ حَتَّى اسْتَوَتْ بِهِ عَلَى الْبَيْدَاءِ، حَمِدَ اللَّهَ وَسَبَّحَ وَكَبَّرَ، ثُمَّ أَهَلَّ بِحَجٍّ وَعُمْرَةٍ، وَأَهَلَّ النَّاسُ بِهِمَا، فَلَمَّا قَدِمْنَا أَمَرَ النَّاسَ فَحَلُّوا، حَتَّى كَانَ يَوْمُ التَّرْوِيَةِ أَهَلُّوا بِالْحَجِّ قَالَ وَنَحَرَ النَّبِيُّ صلى الله عليه وسلم بَدَنَاتٍ بِيَدِهِ قِيَامًا، وَذَبَحَ رَسُولُ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم بِالْمَدِينَةِ كَبْشَيْنِ أَمْلَحَيْنِ‏.‏ قَالَ أَبُو عَبْدِ اللَّهِ قَالَ بَعْضُهُمْ هَذَا عَنْ أَيُّوبَ عَنْ رَجُلٍ عَنْ أَنَسٍ‏.‏


Chapter: The praising and glorification of Allah and saying Takbir before Talbiya, while mounting animal

Narrated Anas bin Malik: Allah's Messenger (PBUH) offered four rak`at of Zuhr prayer at Medina and we were in his company, and two rak`at of the `Asr prayer at Dhul-Hulaifa and then passed the night there till it was dawn; then he rode, and when he reached Al-Baida', he praised and glorified Allah and said Takbir (i.e. Al hamdu-li l-lah and Subhanallah(1) and Allahu-Akbar). Then he and the people along with him recited Talbiya with the intention of performing Hajj and Umra. When we reached (Mecca) he ordered us to finish the lhram (after performing the Umra) (only those who had no Hadi (animal for sacrifice) with them were asked to do so) till the day of Tarwiya that is 8th Dhul-Hijja when they assumed Ihram for Hajj. The Prophet sacrificed many camels (slaughtering them) with his own hands while standing. While Allah's Apostle was in Medina he sacrificed two horned rams black and white in color in the Name of Allah." ھم سے موسیٰ بن اسماعیل نے بیان کیا ، کھا کھ ھم سے وھیب بن خالد نے بیان کیا ، کھا کھ ھم سے ایوب سختیانی نے بیان کیا ان سے ابوقلابھ نے اور ان سے انس نے کھ رسول اللھ صلی اللھ علیھ وسلم نے ، مدینھ میں ھم بھی آپ صلی اللھ علیھ وسلم کے ساتھ تھے ظھر کی نماز چار رکعت پڑھی اور ذوالحلیفھ میں عصر کی نماز دو رکعت ۔ آپ صلی اللھ علیھ وسلم رات کو وھیں رھے ۔ صبح ھوئی تو مقام بیداء سے سواری پر بیٹھتے ھوئے اللھ تعالیٰ کی حمد ، اس کی تسبیح اور تکبیر کھی ۔ پھر حج اور عمرھ کے لیے ایک ساتھ احرام باندھا اور لوگوں نے بھی آپ صلی اللھ علیھ وسلم کے ساتھ دونوں کا ایک ساتھ احرام باندھا ( یعنی قران کیا ) جب ھم مکھ آئے تو آپ صلی اللھ علیھ وسلم کے حکم سے ( جن لوگوں نے حج تمتع کا احرام باندھا تھا ان ) سب نے احرام کھول دیا ۔ پھر آٹھویں تاریخ میں سب نے حج کا احرام باندھا ۔ انھوں نے کھا کھ نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم نے اپنے ھاتھ سے کھڑے ھو کر بھت سے اونٹ نحر کئے ۔ حضور اکرم صلی اللھ علیھ وسلم نے ( عیدالاضحی کے دن ) مدینھ میں بھی دو چتکبرے سینگوں والے مینڈھے ذبح کئے تھے ۔ ابوعبداللھ امام بخاری نے کھا کھ بعض لوگ اس حدیث کو یوں روایت کرتے ھیں ایوب سے ، انھوں نے ایک شخص سے ، انھوں نے انس سے ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 25 Hadith no 1551
Web reference: Sahih Bukhari Volume 2 Book 26 Hadith no 623


حَدَّثَنَا أَبُو عَاصِمٍ، أَخْبَرَنَا ابْنُ جُرَيْجٍ، قَالَ أَخْبَرَنِي صَالِحُ بْنُ كَيْسَانَ، عَنْ نَافِعٍ، عَنِ ابْنِ عُمَرَ ـ رضى الله عنهما ـ قَالَ أَهَلَّ النَّبِيُّ صلى الله عليه وسلم حِينَ اسْتَوَتْ بِهِ رَاحِلَتُهُ قَائِمَةً‏.‏


Chapter: Reciting Talbiya when one has mounted his Rahila

Narrated Ibn `Umar: The Prophet (p.b.u.h) recited Talbiya when he had mounted his Mount and was ready to set out. ھم سے ابوعاصم نے بیان کیا ، کھا کھ ھمیں ابن جریج نے خبر دی ، کھا کھ مجھے صالح بن کیسان نے خبر دی ، انھیں نافع نے اور ان سے ابن عمر رضی اللھ عنھما نے کھ جب رسول اللھ صلی اللھ علیھ وسلم کو لے کر آپ صلی اللھ علیھ وسلم کی سواری پوری طرح کھڑی ھو گئی تھی تو آپ صلی اللھ علیھ وسلم نے اس وقت لبیک پکارا ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 25 Hadith no 1552
Web reference: Sahih Bukhari Volume 2 Book 26 Hadith no 624


وَقَالَ أَبُو مَعْمَرٍ حَدَّثَنَا عَبْدُ الْوَارِثِ، حَدَّثَنَا أَيُّوبُ، عَنْ نَافِعٍ، قَالَ كَانَ ابْنُ عُمَرَ ـ رضى الله عنهما ـ إِذَا صَلَّى بِالْغَدَاةِ بِذِي الْحُلَيْفَةِ أَمَرَ بِرَاحِلَتِهِ فَرُحِلَتْ ثُمَّ رَكِبَ، فَإِذَا اسْتَوَتْ بِهِ اسْتَقْبَلَ الْقِبْلَةَ قَائِمًا، ثُمَّ يُلَبِّي حَتَّى يَبْلُغَ الْمَحْرَمَ، ثُمَّ يُمْسِكُ حَتَّى إِذَا جَاءَ ذَا طُوًى بَاتَ بِهِ حَتَّى يُصْبِحَ، فَإِذَا صَلَّى الْغَدَاةَ اغْتَسَلَ، وَزَعَمَ أَنَّ رَسُولَ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم فَعَلَ ذَلِكَ‏.‏ تَابَعَهُ إِسْمَاعِيلُ عَنْ أَيُّوبَ فِي الْغَسْلِ‏.‏


Chapter: Reciting Talbiya while facing the Qiblah

Narrated Nafi', 'Whenever Ibn 'Umar finished his morning Salat at Dhul-Hulaifa he would get his Rahila (mount) prepared. Then, he would ride on it, and after it had stood up straight (ready to set out), he would face Al-Qiblah (the Ka,bah at Makkah) while sitting (on his mount) and recite Talbiya. When he had reached the boundaries of the Haram (or Makkah), he would stop recitation of Talbiya till he reached Dhi-Tuwa (near Makkah) where he would pass the night till it was dawn. After offering the morning Salat, he would take a bath. He claimed that Allah's Messenger (PBUH) had done the same. اور ابومعمر نے کھا کھ ھم سے عبدالوارث نے بیان کیا ، انھوں نے کھا کھ ھم سے ایوب سختیانی نے نافع سے بیان کیا ، انھوں نے کھا کھ عبداللھ بن عمر رضی اللھ عنھما جب ذوالحلیفھ میں صبح کی نماز پڑھ چکے تو اپنی اونٹنی پر پالان لگانے کا حکم فرمایا ، سواری لائی گئی تو آپ اس پر سوار ھوئے اور جب وھ آپ کو لے کر کھڑی ھو گئی تو آپ کھڑے ھو کر قبلھ رو ھو گئے اور پھر لبیک کھنا شروع کیا تاآنکھ حرم میں داخل ھو گئے ۔ وھاں پھنچ کر آپ نے لبیک کھنا بند کر دیا ۔ پھرذی طویٰ میں تشریف لا کر رات وھیں گزارتے صبح ھوتی تو نماز پڑھتے اور غسل کرتے ( پھر مکھ میں داخل ھوتے ) آپ یقین کے ساتھ یھ جانتے تھے کھ رسول اللھ صلی اللھ علیھ وسلم نے بھی اسی طرح کیا تھا ۔ عبدالوارث کی طرح اس حدیث کو اسماعیل نے بھی ایوب سے روایت کیا ۔ اس میں غسل کا ذکر ھے ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 25 Hadith no 1553
Web reference: Sahih Bukhari Volume 2 Book 26 Hadith no 625


حَدَّثَنَا سُلَيْمَانُ بْنُ دَاوُدَ أَبُو الرَّبِيعِ، حَدَّثَنَا فُلَيْحٌ، عَنْ نَافِعٍ، قَالَ كَانَ ابْنُ عُمَرَ ـ رضى الله عنهما ـ إِذَا أَرَادَ الْخُرُوجَ إِلَى مَكَّةَ ادَّهَنَ بِدُهْنٍ لَيْسَ لَهُ رَائِحَةٌ طَيِّبَةٌ، ثُمَّ يَأْتِي مَسْجِدَ الْحُلَيْفَةِ فَيُصَلِّي ثُمَّ يَرْكَبُ، وَإِذَا اسْتَوَتْ بِهِ رَاحِلَتُهُ قَائِمَةً أَحْرَمَ، ثُمَّ قَالَ هَكَذَا رَأَيْتُ النَّبِيَّ صلى الله عليه وسلم يَفْعَلُ‏.‏

Narrated Nafi`: Whenever Ibn `Umar intended to go to Mecca he used to oil himself with a sort of oil that had no pleasant smell, then he would go to the Mosque of Al-Hulaita and offer the prayer, and then ride. When he mounted well on his Mount and the Mount stood up straight, he would proclaim the intention of assuming Ihram, and he used to say that he had seen the Prophet (PBUH) doing the same. ھم سے ابوالربیع سلیمان بن داود نے بیان کیا ، انھوں نے کھا کھ ھم سے فلیح بن سلیمان نے بیان کیا ، ان سے نافع نے بیان کیا کھ حضرت عبداللھ بن عمر رضی اللھ عنھما جب مکھ جانے کا ارادھ کرتے تھے پھلے خوشبو کے بغیر تیل استعمال کرتے ۔ اس کے بعد مسجد ذوالحلیفھ میں تشریف لاتے یھاں صبح کی نماز پڑھتے ، پھر سوار ھوتے ، جب اونٹنی آپ کو لے کر پوری طرح کھڑی ھو جاتی تو احرام باندھتے ۔ پھر فرماتے کھ میں نے رسول اللھ صلی اللھ علیھ وسلم کو اس طرح کرتے دیکھا تھا ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 25 Hadith no 1554
Web reference: Sahih Bukhari Volume 2 Book 26 Hadith no 625


حَدَّثَنَا مُحَمَّدُ بْنُ الْمُثَنَّى، قَالَ حَدَّثَنِي ابْنُ أَبِي عَدِيٍّ، عَنِ ابْنِ عَوْنٍ، عَنْ مُجَاهِدٍ، قَالَ كُنَّا عِنْدَ ابْنِ عَبَّاسٍ ـ رضى الله عنهما ـ فَذَكَرُوا الدَّجَّالَ أَنَّهُ قَالَ ‏"‏ مَكْتُوبٌ بَيْنَ عَيْنَيْهِ كَافِرٌ ‏"‏‏.‏ فَقَالَ ابْنُ عَبَّاسٍ لَمْ أَسْمَعْهُ وَلَكِنَّهُ قَالَ ‏"‏ أَمَّا مُوسَى كَأَنِّي أَنْظُرُ إِلَيْهِ إِذِ انْحَدَرَ فِي الْوَادِي يُلَبِّي ‏"‏‏.‏


Chapter: Reciting Talbiya on entering a valley

Narrated Mujahid: I was in the company of Ibn `Abbas and the people talked about Ad-Dajjal and said, "Ad-Dajjal will come with the word Kafir (non-believer) written in between his eyes." On that Ibn `Abbas said, "I have not heard this from the Prophet (PBUH) but I heard him saying, 'As if I saw Moses just now entering the valley reciting Talbyia. ' " ھم سے محمد بن مثنیٰ نے بیان کیا ، کھا کھ ھم سے ابن عدی نے بیان کیا ، ان سے عبداللھ بن عون نے ان سے مجاھد نے بیان کیا ، کھا کھ ھم عبداللھ بن عباس رضی اللھ عنھما کی خدمت میں حاضر تھے ۔ لوگوں نے دجال کا ذکر کیا کھ آنحضور صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا ھے کھ اس کی دونوں آنکھوں کے درمیان کافر لکھا ھوا ھو گا ۔ تو ابن عباس رضی اللھ عنھما نے فرمایا کھ میں نے تو یھ نھیں سنا ۔ ھاں آپ صلی اللھ علیھ وسلم نے یھ فرمایا تھا کھ گویا میں موسیٰ علیھ السلام کو دیکھ رھا ھوں کھ جب آپ نالے میں اترے تو لبیک کھھ رھے ھیں ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 25 Hadith no 1555
Web reference: Sahih Bukhari Volume 2 Book 26 Hadith no 626


حَدَّثَنَا عَبْدُ اللَّهِ بْنُ مَسْلَمَةَ، حَدَّثَنَا مَالِكٌ، عَنِ ابْنِ شِهَابٍ، عَنْ عُرْوَةَ بْنِ الزُّبَيْرِ، عَنْ عَائِشَةَ ـ رضى الله عنها ـ زَوْجِ النَّبِيِّ صلى الله عليه وسلم قَالَتْ خَرَجْنَا مَعَ النَّبِيِّ صلى الله عليه وسلم فِي حَجَّةِ الْوَدَاعِ، فَأَهْلَلْنَا بِعُمْرَةٍ ثُمَّ قَالَ النَّبِيُّ صلى الله عليه وسلم ‏"‏ مَنْ كَانَ مَعَهُ هَدْىٌ فَلْيُهِلَّ بِالْحَجِّ مَعَ الْعُمْرَةِ، ثُمَّ لاَ يَحِلَّ حَتَّى يَحِلَّ مِنْهُمَا جَمِيعًا ‏"‏ فَقَدِمْتُ مَكَّةَ وَأَنَا حَائِضٌ، وَلَمْ أَطُفْ بِالْبَيْتِ وَلاَ بَيْنَ الصَّفَا وَالْمَرْوَةِ، فَشَكَوْتُ ذَلِكَ إِلَى النَّبِيِّ صلى الله عليه وسلم فَقَالَ ‏"‏ انْقُضِي رَأْسَكِ وَامْتَشِطِي، وَأَهِلِّي بِالْحَجِّ، وَدَعِي الْعُمْرَةَ ‏"‏‏.‏ فَفَعَلْتُ فَلَمَّا قَضَيْنَا الْحَجَّ أَرْسَلَنِي النَّبِيُّ صلى الله عليه وسلم مَعَ عَبْدِ الرَّحْمَنِ بْنِ أَبِي بَكْرٍ إِلَى التَّنْعِيمِ فَاعْتَمَرْتُ فَقَالَ ‏"‏ هَذِهِ مَكَانَ عُمْرَتِكِ ‏"‏‏.‏ قَالَتْ فَطَافَ الَّذِينَ كَانُوا أَهَلُّوا بِالْعُمْرَةِ بِالْبَيْتِ وَبَيْنَ الصَّفَا وَالْمَرْوَةِ، ثُمَّ حَلُّوا، ثُمَّ طَافُوا طَوَافًا وَاحِدًا بَعْدَ أَنْ رَجَعُوا مِنْ مِنًى، وَأَمَّا الَّذِينَ جَمَعُوا الْحَجَّ وَالْعُمْرَةَ فَإِنَّمَا طَافُوا طَوَافًا وَاحِدًا‏.‏

Narrated Aisha: (the wife of the Prophet (p.b.u.h) We set out with the Prophet (PBUH) in his last Hajj and we assumed Ihram for Umra. The Prophet (PBUH) then said, "Whoever has the Hadi with him should assume Ihram for Hajj along with `Umra and should not finish the Ihram till he finishes both." I was menstruating when I reached Mecca, and so I neither did Tawaf round the Ka`ba nor Tawaf between Safa and Marwa. I complained about that to the Prophet (PBUH) on which he replied, "Undo and comb your head hair, and assume Ihram for Hajj (only) and leave the Umra." So, I did so. When we had performed the Hajj, the Prophet sent me with my brother `Abdur-Rahman bin Abu Bakr to Tan`im. So I performed the `Umra. The Prophet (PBUH) said to me, "This `Umra is instead of your missed one." Those who had assumed Ihram for `Umra (Hajj-atTamattu) performed Tawaf round the Ka`ba and between Safa and Marwa and then finished their Ihram. After returning from Mina, they performed another Tawaf (between Safa and Marwa). Those who had assumed Ihram for Hajj and `Umra together (Hajj-al-Qiran) performed only one Tawaf (between Safa and Marwa). ھم سے عبداللھ بن مسلمھ قعنبی نے بیان کیا ، کھا کھ ھمیں امام مالک نے ابن شھاب سے خبر دی ، انھیں عروھ بن زبیر نے ، ان سے نبی کریم کی زوجھ مطھرھ حضرت عائشھ رضی اللھ عنھا نے بیان کیا کھ ھم حجتھ الوداع میں نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم کے ساتھ روانھ ھوئے ۔ پھلے ھم نے عمرھ کا احرام باندھا لیکن نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا کھ جس کے ساتھ قربانی ھو تو اسے عمرھ کے ساتھ حج کا بھی احرام باندھ لینا چاھئے ۔ ایسا شخص درمیان میں حلال نھیں ھو سکتا بلکھ حج اور عمرھ دونوں سے ایک ساتھ حلال ھو گا ۔ میں بھی مکھ آئی تھی اس وقت میں حائضھ ھو گئی ، اس لیے نھ بیت اللھ کا طواف کر سکی اور نھ صفا اور مروھ کی سعی ۔ میں نے اس کے متعلق نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم سے شکوھ کیا تو آپ صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا کھ اپنا سر کھول ڈال ، کنگھا کر اور عمرھ چھوڑ کر حج کا احرام باندھ لے ۔ چنانچھ میں نے ایسا ھی کیا پھر جب ھم حج سے فارغ ھو گئے تو رسول اللھ صلی اللھ علیھ وسلم نے مجھے میرے بھائی عبدالرحمٰن بن ابی بکر کے ساتھ تنعیم بھیجا ۔ میں نے وھاں سے عمرھ کا احرام باندھا ( اور عمرھ ادا کیا ) آنحضور صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا کھ یھ تمھارے اس عمرھ کے بدلے میں ھے ۔ ( جسے تم نے چھوڑ دیا تھا ) حضرت عائشھ رضی اللھ عنھا نے بیان کیا کھ جن لوگوں نے ( حجۃ الوداع میں ) صرف عمرھ کا احرام باندھا تھا ، وھ بیت اللھ کا طواف صفا اور مروھ کی سعی کر کے حلال ھو گئے ۔ پھر منیٰ سے واپس ھونے پر دوسرا طواف ( یعنی طواف الزیارۃ ) کیا لیکن جن لوگوں نے حج اور عمرھ کا ایک ساتھ احرام باندھا تھا ، انھوں نے صرف ایک ھی طواف کیا یعنی طواف الزیارۃ کیا ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 25 Hadith no 1556
Web reference: Sahih Bukhari Volume 2 Book 26 Hadith no 627



@2019 Copyrights: if you have any objection regarding any shared content on pdf9.com please click here.