Search hadith by
Hadith Book
Search Query
Search Language
English Arabic Urdu
Search Type Basic    Case Sensitive
 

Sahih Bukhari

Invocations

كتاب الدعوات

حَدَّثَنَا مُسَدَّدٌ، حَدَّثَنَا يَحْيَى، عَنْ هِشَامِ بْنِ أَبِي عَبْدِ اللَّهِ، عَنْ قَتَادَةَ، عَنْ أَبِي الْعَالِيَةِ، عَنِ ابْنِ عَبَّاسٍ، أَنَّ رَسُولَ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم كَانَ يَقُولُ عِنْدَ الْكَرْبِ ‏"‏ لاَ إِلَهَ إِلاَّ اللَّهُ الْعَظِيمُ الْحَلِيمُ، لاَ إِلَهَ إِلاَّ اللَّهُ رَبُّ الْعَرْشِ الْعَظِيمِ، لاَ إِلَهَ إِلاَّ اللَّهُ رَبُّ السَّمَوَاتِ، وَرَبُّ الأَرْضِ، وَرَبُّ الْعَرْشِ الْكَرِيمِ ‏"‏‏.‏ وَقَالَ وَهْبٌ حَدَّثَنَا شُعْبَةُ عَنْ قَتَادَةَ مِثْلَهُ‏.‏

Narrated Ibn `Abbas: Allah's Messenger (PBUH) used to say at a time of distress, "La ilaha illal-lahu Rabbul-l-'arsh il-'azim, La ilaha illallahu Rabbu-s-samawati wa Rabbu-l-ard, Rabbu-l-'arsh-il-Karim." ھم سے مسدد نے بیان کیا ، انھوں نے کھا ھم سے یحییٰ بن ابی کثیر نے بیان کیا ، ان سے ھشام بن ابی عبداللھ نے بیان کیا ، ان سے قتادھ نے ، ان سے ابوالعالیھ نے اور ان سے حضرت ابن عباس رضی اللھ عنھما نے کھ رسول اللھ کریم صلی اللھ علیھ وسلم حالت پریشانی میں یھ دعا کیا کرتے تھے لا إله إلا الله العظيم الحليم ، ‏‏‏‏ لا إله إلا الله رب العرش العظيم ، ‏‏‏‏ لا إله إلا الله رب السموات ، ‏‏‏‏ ورب الأرض ، ‏‏‏‏ ورب العرش الكريم ‏ ” اللھ صاحب عظمت اور بردبار کے سوا کوئی معبود نھیں ، اللھ کے سوا کوئی معبود نھیں جو عرش عظیم کا رب ھے ، اللھ کے سوا کوئی معبود نھیں جو آسمانوں اور زمینوں کا رب ھے اور عرش عظیم کا رب ھے ۔ “ اور وھب نے بیان کیا کھ ھم سے شعبھ نے بیان کیا ، ان سے قتادھ نے اس طرح بیان کیا ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 80 Hadith no 6346
Web reference: Sahih Bukhari Volume 8 Book 75 Hadith no 357


حَدَّثَنَا عَلِيُّ بْنُ عَبْدِ اللَّهِ، حَدَّثَنَا سُفْيَانُ، حَدَّثَنِي سُمَىٌّ، عَنْ أَبِي صَالِحٍ، عَنْ أَبِي هُرَيْرَةَ، كَانَ رَسُولُ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم يَتَعَوَّذُ مِنْ جَهْدِ الْبَلاَءِ، وَدَرَكِ الشَّقَاءِ، وَسُوءِ الْقَضَاءِ، وَشَمَاتَةِ الأَعْدَاءِ‏.‏ قَالَ سُفْيَانُ الْحَدِيثُ ثَلاَثٌ زِدْتُ أَنَا وَاحِدَةً، لاَ أَدْرِي أَيَّتُهُنَّ هِيَ‏.‏


Chapter: To seek refuge with Allah from a calamity

Narrated Abu Huraira: Allah's Messenger (PBUH) used to seek refuge with Allah from the difficult moment of a calamity and from being overtaken by destruction and from being destined to an evil end, and from the malicious joy of enemies. Sufyan said, "This narration contained three items only, but I added one. I do not know which one that was." ھم سے علی بن عبداللھ مدینی نے بیان کیا ، کھا ھم سے سفیان بن عیینھ نے بیان کیا ، کھامجھ سے سمی نے بیان کیا ، ان سے ابوصالح نے اور ان سے حضرت ابوھریرھ رضی اللھ عنھ نے کھ نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم مصیبت کی سختی ، تباھی تک پھنچ جانے ، قضاء و قدر کی برائی اور دشمنوں کے خوش ھونے سے پناھ مانگتے تھے اور سفیان نے کھا کھ حدیث میں تین صفات کا بیان تھا ۔ ایک میں نے بھلا دی تھی اور مجھے یاد نھیں کھ وھ ایک کون سی صفت ھے ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 80 Hadith no 6347
Web reference: Sahih Bukhari Volume 8 Book 75 Hadith no 358


حَدَّثَنَا سَعِيدُ بْنُ عُفَيْرٍ، قَالَ حَدَّثَنِي اللَّيْثُ، قَالَ حَدَّثَنِي عُقَيْلٌ، عَنِ ابْنِ شِهَابٍ، أَخْبَرَنِي سَعِيدُ بْنُ الْمُسَيَّبِ، وَعُرْوَةُ بْنُ الزُّبَيْرِ، فِي رِجَالٍ مِنْ أَهْلِ الْعِلْمِ أَنَّ عَائِشَةَ ـ رضى الله عنها ـ قَالَتْ كَانَ رَسُولُ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم يَقُولُ وَهْوَ صَحِيحٌ ‏"‏ لَنْ يُقْبَضَ نَبِيٌّ قَطُّ حَتَّى يَرَى مَقْعَدَهُ مِنَ الْجَنَّةِ ثُمَّ يُخَيَّرُ ‏"‏‏.‏ فَلَمَّا نَزَلَ بِهِ وَرَأْسُهُ عَلَى فَخِذِي، غُشِيَ عَلَيْهِ سَاعَةً، ثُمَّ أَفَاقَ فَأَشْخَصَ بَصَرَهُ إِلَى السَّقْفِ ثُمَّ قَالَ ‏"‏ اللَّهُمَّ الرَّفِيقَ الأَعْلَى ‏"‏‏.‏ قُلْتُ إِذًا لاَ يَخْتَارُنَا، وَعَلِمْتُ أَنَّهُ الْحَدِيثُ الَّذِي كَانَ يُحَدِّثُنَا، وَهْوَ صَحِيحٌ‏.‏ قَالَتْ فَكَانَتْ تِلْكَ آخِرَ كَلِمَةٍ تَكَلَّمَ بِهَا ‏"‏ اللَّهُمَّ الرَّفِيقَ الأَعْلَى ‏"‏‏.‏


Chapter: The invocation of the Prophet (saws) "O Allah! The Highest Companion"

Narrated `Aisha: When Allah's Messenger (PBUH) was healthy, he used to say, "No prophet dies till he is shown his place in Paradise, and then he is given the option (to live or die)." So when death approached him(during his illness), and while his head was on my thigh, he became unconscious for a while, and when he recovered, he fixed his eyes on the ceiling and said, "O Allah! (Let me join) the Highest Companions (see Qur'an 4:69)," I said, "So, he does not choose us." Then I realized that it was the application of the statement he used to relate to us when he was healthy. So that was his last utterance (before he died), i.e. "O Allah! (Let me join) the Highest Companions." ھم سے سعید بن عفیر نے بیان کیا ، کھا کھ مجھ سے لیث بن سعد نے بیان کیا ، کھا کھ مجھ سے عقیل نے ، ان سے ابن شھاب نے ، انھیںسعید بن مسیب اور عروھ بن زبیر نے بھت سے علم والوں کے سامنے خبر دی کھ عائشھ رضی اللھ عنھا نے بیان کیا کھ رسول کریم صلی اللھ علیھ وسلم جب بیمار نھیں تھے تو فرمایا کرتے تھے کھ جب بھی کسی نبی کی روح قبض کی جاتی تو پھلے جنت میں اس کا ٹھکانا دکھا دیا جاتا ھے ، اس کے بعد اسے اختیار دیا جاتا ھے ( کھ چاھیں دنیا میں رھیں یا جنت میں چلیں ) چنانچھ جب آنحضرت صلی اللھ علیھ وسلم بیمار ھوئے اور سرمبارک میری ران پر تھا ۔ اس وقت آپ پر تھوڑی دیر کے لئے غشی طاری ھوئی ۔ پھر جب آپ کو اس سے کچھ ھوش ھوا تو چھت کی طرف ٹکٹکی باندھ کر دیکھنے لگے ، پھر فرمایااللهم الرفيق الأعلى ” اے اللھ ! رفیق اعلیٰ کے ساتھ ملا دے ۔ “ میں نے سمجھ لیا کھ آنحضرت صلی اللھ علیھ وسلم اب ھمیں اختیار نھیں کر سکتے ۔ میں سمجھ گئی کھ جو بات آنحضرت صلی اللھ علیھ وسلم صحت کے زمانے میں بیان فرمایا کرتے تھے ، یھ وھی بات ھے ۔ بیان کیا کھ یھ آنحضرت صلی اللھ علیھ وسلم کا آخری کلمھ تھا جو آپ نے زبان سے ادا فرمایا کھاللهم الرفيق الأعلى ” اے اللھ ! رفیق اعلیٰ کے ساتھ ملا دے ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 80 Hadith no 6348
Web reference: Sahih Bukhari Volume 8 Book 75 Hadith no 359


حَدَّثَنَا مُسَدَّدٌ، حَدَّثَنَا يَحْيَى، عَنْ إِسْمَاعِيلَ، عَنْ قَيْسٍ، قَالَ أَتَيْتُ خَبَّابًا وَقَدِ اكْتَوَى سَبْعًا قَالَ لَوْلاَ أَنَّ رَسُولَ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم نَهَانَا أَنْ نَدْعُوَ بِالْمَوْتِ لَدَعَوْتُ بِهِ‏.‏


Chapter: The invocation for death or life

Narrated Qais: I came to Khabbab who had been branded with seven brands(1) and he said, "Had Allah's Messenger (PBUH) not forbidden us to invoke (Allah) for death, I would have invoked (Allah) for it." ھم سے مسدد بن مسرھد نے بیان کیا ، کھا ھم سے یحییٰ بن سعید قطان نے بیان کیا ، ان سے اسماعیل بن ابی خالد نے بیان کیا ، ان سے قیس بن ابی حازم نے بیان کیا ، کھاکھ میں خباب بن ارت رضی اللھ عنھ کی خدمت میں حاضر ھوا انھوں نے سات داغ ( کسی بیماری کے علاج کے لئے ) لگوائے تھے ۔ انھوں نے کھا کھ رسول اللھ صلی اللھ علیھ وسلم نے اگر ھمیں موت کی دعا کرنے سے منع نھ کیا ھوتا تو میں ضرور اس کی دعا کرتا ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 80 Hadith no 6349
Web reference: Sahih Bukhari Volume 8 Book 75 Hadith no 360


حَدَّثَنَا مُحَمَّدُ بْنُ الْمُثَنَّى، حَدَّثَنَا يَحْيَى، عَنْ إِسْمَاعِيلَ، قَالَ حَدَّثَنِي قَيْسٌ، قَالَ أَتَيْتُ خَبَّابًا وَقَدِ اكْتَوَى سَبْعًا فِي بَطْنِهِ فَسَمِعْتُهُ يَقُولُ لَوْلاَ أَنَّ النَّبِيَّ صلى الله عليه وسلم نَهَانَا أَنْ نَدْعُوَ بِالْمَوْتِ لَدَعَوْتُ بِهِ‏.‏

Narrated Qais: I came to Khabbab who had been branded with seven brands over his `Abdomen, and I heard him saying, "If the Prophet: had not forbidden us to invoke (Allah) for death, I would have invoked Allah for it." ھم سے محمد بن مثنیٰ نے بیان کیا ، کھا ھم سے یحییٰ قطان نے بیان کیا ، ان سے اسماعیل بن ابی خالد نے بیان کیا ، ان سے قیس بن ابی حازم نے بیان کیا ، کھاکھ میں خباب بن ارت رضی اللھ عنھ کی خدمت میں حاضر ھوا انھوں نے اپنے پیٹ پر سات داغ لگوا رکھے تھے ، میں نے سنا کھ وھ کھھ رھے تھے کھ اگر نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم نے ھمیں موت کی دعا کرنے سے منع نھ کیا ھوتا تو میں اس کی ضرور دعا کر لیتا ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 80 Hadith no 6350
Web reference: Sahih Bukhari Volume 8 Book 75 Hadith no 361


حَدَّثَنَا ابْنُ سَلاَمٍ، أَخْبَرَنَا إِسْمَاعِيلُ ابْنُ عُلَيَّةَ، عَنْ عَبْدِ الْعَزِيزِ بْنِ صُهَيْبٍ، عَنْ أَنَسٍ ـ رضى الله عنه ـ قَالَ قَالَ رَسُولُ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم ‏"‏ لاَ يَتَمَنَّيَنَّ أَحَدٌ مِنْكُمُ الْمَوْتَ لِضُرٍّ نَزَلَ بِهِ، فَإِنْ كَانَ لاَ بُدَّ مُتَمَنِّيًا لِلْمَوْتِ فَلْيَقُلِ اللَّهُمَّ أَحْيِنِي مَا كَانَتِ الْحَيَاةُ خَيْرًا لِي، وَتَوَفَّنِي إِذَا كَانَتِ الْوَفَاةُ خَيْرًا لِي ‏"‏‏.‏

Narrated Anas: Allah's Messenger (PBUH) said," None of you should long for death because of a calamity that had befallen him, and if he cannot, but long for death, then he should say, 'O Allah! Let me live as long as life is better for me, and take my life if death is better for me.' " ھم سے محمد بن سلام نے بیان کیا ، انھوں نے کھا ھم کو اسماعیل بن علیھ نے خبر دی ، انھوں نے کھا ھمیں عبد العزیز بن صھیب نے بتایا اور ان سے حضرت انس رضی اللھ عنھ نے بیان کیاکھ رسول کریم صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا تم میں سے کوئی شخص کسی تکلیف کی وجھ سے جو اسے ھونے لگی ھو ، موت کی تمنا نھ کرے ۔ اگر موت کی تمنا ضروری ھی ھو جائے تو یھ کھے کھ اے اللھ ! جب تک میرے لئے زندگی بھتر ھے مجھے زندھ رکھیو اور جب میرے لئے موت بھتر ھو تو مجھے اٹھا لیجیو ۔ “

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 80 Hadith no 6351
Web reference: Sahih Bukhari Volume 8 Book 75 Hadith no 362



@2019 Copyrights: if you have any objection regarding any shared content on pdf9.com please click here.