Search hadith by
Hadith Book
Search Query
Search Language
English Arabic Urdu
Search Type Basic    Case Sensitive
 

Sahih Bukhari

Laws of Inheritance (Al-Faraa'id)

كتاب الفرائض

حَدَّثَنَا عَبْدُ اللَّهِ بْنُ يُوسُفَ، أَخْبَرَنَا مَالِكٌ، عَنِ ابْنِ شِهَابٍ، عَنْ عُرْوَةَ، عَنْ عَائِشَةَ ـ رضى الله عنها ـ قَالَتْ كَانَ عُتْبَةُ عَهِدَ إِلَى أَخِيهِ سَعْدٍ أَنَّ ابْنَ وَلِيدَةِ زَمْعَةَ مِنِّي، فَاقْبِضْهُ إِلَيْكَ‏.‏ فَلَمَّا كَانَ عَامَ الْفَتْحِ أَخَذَهُ سَعْدٌ فَقَالَ ابْنُ أَخِي عَهِدَ إِلَىَّ فِيهِ‏.‏ فَقَامَ عَبْدُ بْنُ زَمْعَةَ فَقَالَ أَخِي وَابْنُ وَلِيدَةِ أَبِي، وُلِدَ عَلَى فِرَاشِهِ‏.‏ فَتَسَاوَقَا إِلَى النَّبِيِّ صلى الله عليه وسلم فَقَالَ سَعْدٌ يَا رَسُولَ اللَّهِ ابْنُ أَخِي قَدْ كَانَ عَهِدَ إِلَىَّ فِيهِ‏.‏ فَقَالَ عَبْدُ بْنُ زَمْعَةَ أَخِي وَابْنُ وَلِيدَةِ أَبِي، وُلِدَ عَلَى فِرَاشِهِ‏.‏ فَقَالَ النَّبِيُّ صلى الله عليه وسلم ‏"‏ هُوَ لَكَ يَا عَبْدُ بْنَ زَمْعَةَ، الْوَلَدُ لِلْفِرَاشِ وَلِلْعَاهِرِ الْحَجَرُ ‏"‏‏.‏ ثُمَّ قَالَ لِسَوْدَةَ بِنْتِ زَمْعَةَ ‏"‏ احْتَجِبِي مِنْهُ ‏"‏‏.‏ لِمَا رَأَى مِنْ شَبَهِهِ بِعُتْبَةَ، فَمَا رَآهَا حَتَّى لَقِيَ اللَّهَ‏.‏


Chapter: The child is for the owner of the bed

Narrated `Aisha: `Utba (bin Abi Waqqas) said to his brother Sa`d, "The son of the slave girl of Zam`a is my son, so be his custodian." So when it was the year of the Conquest of Mecca, Sa`d took that child and said, "He is my nephew, and my brother told me to be his custodian." On that, 'Abu bin Zam`a got up and said, 'but the child is my brother, and the son of my father's slave girl as he was born on his bed." So they both went to the Prophet. Sa`d said, "O Allah's Messenger (PBUH)! (This is) the son of my brother and he told me to be his custodian." Then 'Abu bin Zam`a said, "(But he is) my brother and the son of the slave girl of my father, born on his bed." The Prophet (PBUH) said, "This child is for you. O 'Abu bin Zam`a, as the child is for the owner of the bed, and the adulterer receives the stones." He then ordered (his wife) Sauda bint Zam`a to cover herself before that boy as he noticed the boy's resemblance to `Utba. Since then the boy had never seen Sauda till he died. ھم سے عبداللھ بن یوسف نے بیان کیا ، کھا ھم کو امام مالک نے خبر دی ، انھیں ابن شھاب نے ، انھیں عروھ نے اور ان سے عائشھ رضی اللھ عنھا نے بیان کیا کھ عتبھ اپنے بھائی سعد رضی اللھ عنھ کو وصیت کرگیا تھا کھ زمعھ کی کنیز کا لڑکا میرا ھے اور اسے اپنی پروریش میں لے لینا ۔ فتح مکھ کے سال سعد رضی اللھ عنھ نے اسے لینا چاھا اور کھا کھ میرے بھائی کا لڑکا ھے اور اس نے مجھے اس کے بارے میں وصیت کی تھی ۔ اس پر عبد بن زمعھ رضی اللھ عنھ کھڑے ھوئے اور کھا کھ یھ میرا بھائی ھے اور میرے باپ کی لونڈی کا لڑکا ھے ، اس کے بستر پر پیدا ھوا ھے ۔ آخر یھ دونوں یھ معاملھ رسول کریم صلی اللھ علیھ وسلم کے پاس لے گئے تو سعد رضی اللھ عنھ نے کھا ، یا رسول اللھ ! ، یھ میرے بھائی کا لڑکا ھے اس نے اس کے بارے میں مجھے وصیت کی تھی ۔ عبد بن زمعھ نے کھا کھ یھ میرا بھائی ھے ، میرے باپ کی باندی کا لڑکا اور باپ کے بستر پر پیدا ھوا ھے ۔ آنحضرت صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا عبد بن زمعھ ! یھ تمھارے پاس رھے گا ، لڑکا بستر کا حق ھے اور زانی کے حصھ میں پتھر ھیں ۔ پھر سودھ بنت زمعھ رضی اللھ عنھا سے کھا کھ اس لڑکے سے پردھ کیا کر کیونکھ عتبھ کے ساتھ اس کی شباھت آپ صلی اللھ علیھ وسلم نے دیکھ لی تھی ۔ چنانچھ پھر اس لڑکے نے ام المؤمنین کو اپنی وفات تک نھیں دیکھا ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 85 Hadith no 6749
Web reference: Sahih Bukhari Volume 8 Book 80 Hadith no 741


حَدَّثَنَا مُسَدَّدٌ، عَنْ يَحْيَى، عَنْ شُعْبَةَ، عَنْ مُحَمَّدِ بْنِ زِيَادٍ، أَنَّهُ سَمِعَ أَبَا هُرَيْرَةَ، عَنِ النَّبِيِّ صلى الله عليه وسلم قَالَ ‏"‏ الْوَلَدُ لِصَاحِبِ الْفِرَاشِ ‏"‏‏.‏

Narrated Abu Huraira: The Prophet (PBUH) said, "The boy is for the owner of the bed." ھم سے مسدد نے بیان کیا ، کھا ھم سے یحییٰ نے ، ان سے شعبھ نے بیان کیا ، ان سے محمد بن زیاد نے بیان کیا ، انھوں نے ابوھریرھ رضی اللھ عنھ سے سنا کھ نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا لڑکا بستر والے کا حق ھوتا ھے ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 85 Hadith no 6750
Web reference: Sahih Bukhari Volume 8 Book 80 Hadith no 742


حَدَّثَنَا حَفْصُ بْنُ عُمَرَ، حَدَّثَنَا شُعْبَةُ، عَنِ الْحَكَمِ، عَنْ إِبْرَاهِيمَ، عَنِ الأَسْوَدِ، عَنْ عَائِشَةَ، قَالَتِ اشْتَرَيْتُ بَرِيرَةَ فَقَالَ النَّبِيُّ صلى الله عليه وسلم ‏"‏ اشْتَرِيهَا، فَإِنَّ الْوَلاَءَ لِمَنْ أَعْتَقَ ‏"‏‏.‏ وَأُهْدِيَ لَهَا شَاةٌ فَقَالَ ‏"‏ هُوَ لَهَا صَدَقَةٌ، وَلَنَا هَدِيَّةٌ ‏"‏‏.‏ قَالَ الْحَكَمُ وَكَانَ زَوْجُهَا حُرًّا، وَقَوْلُ الْحَكَمِ مُرْسَلٌ‏.‏ وَقَالَ ابْنُ عَبَّاسٍ رَأَيْتُهُ عَبْدًا‏.‏

Narrated `Aisha: I bought Barira (a female slave). The Prophet (PBUH) said (to me), "Buy her as the Wala' is for the manumitted." Once she was given a sheep (in charity). The Prophet (PBUH) said, "It (the sheep) is a charitable gift for her (Barira) and a gift for us." Al-Hakam said, "Barira's husband was a free man." Ibn `Abbas said, 'When I saw him, he was a slave." ھم سے حفص بن عمر نے بیان کیا ، کھا ھم سے شعبھ نے بیان کیا ، ان سے حکم نے ، ان سے ابراھیم نے ، ان سے اسود نے اور ان سے عائشھ رضی اللھ عنھا نے بیان کیا کھ میں نے بریرھ رضی اللھ عنھ کو خریدنا چاھا تو رسول اللھ صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا کھ انھیں خرید لے ، ولاء تو اس کے ساتھ قائم ھوتی ھے جو آزاد کر دے اور بریرھ رضی اللھ عنھ کو ایک بکری ملی تو آنحضرت صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا کھ یھ ان کے لیے صدقھ تھی لیکن ھمارے لیے ھدیھ ھے ۔ حکم نے بیان کیا کھ ان کے شوھر آزاد تھے ۔ حکم کا قول مرسل منقول ھے ۔ ابن عباس رضی اللھ عنھما نے کھا کھ میں نے انھیں غلام دیکھا تھا ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 85 Hadith no 6751
Web reference: Sahih Bukhari Volume 8 Book 80 Hadith no 743


حَدَّثَنَا إِسْمَاعِيلُ بْنُ عَبْدِ اللَّهِ، قَالَ حَدَّثَنِي مَالِكٌ، عَنْ نَافِعٍ، عَنِ ابْنِ عُمَرَ، عَنِ النَّبِيِّ صلى الله عليه وسلم قَالَ ‏"‏ إِنَّمَا الْوَلاَءُ لِمَنْ أَعْتَقَ ‏"‏‏.‏

Narrated Ibn `Umar: The Prophet (PBUH) said, "The Wala' is for the manumitted (of the slave). ھم سے اسماعیل بن عبداللھ نے بیان کیا ، انھوں نے کھا کھ مجھ سے مالک نے بیان کیا ، ان سے نافع نے اور ان سے ابن عمر رضی اللھ عنھما نے کھا کھ نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا ولاء اسی کے ساتھ قائم ھوتی ھے جو آزاد کر دے ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 85 Hadith no 6752
Web reference: Sahih Bukhari Volume 8 Book 80 Hadith no 744


حَدَّثَنَا قَبِيصَةُ بْنُ عُقْبَةَ، حَدَّثَنَا سُفْيَانُ، عَنْ أَبِي قَيْسٍ، عَنْ هُزَيْلٍ، عَنْ عَبْدِ اللَّهِ، قَالَ إِنَّ أَهْلَ الإِسْلاَمِ لا يُسَيِّبُونَ، وَإِنَّ أَهْلَ الْجَاهِلِيَّةِ كَانُوا يُسَيِّبُونَ‏.‏


Chapter: The heir of the Sa'iba

Narrated `Abdullah: The Muslims did not free slaves as Sa'iba, but the People of the Pre-lslamic Period of Ignorance used to do so. ھم سے قبیصھ بن عقبھ نے بیان کیا ، کھا ھم سے سفیان نے بیان کیا ، ان سے ابوقیس نے ، ان سے ھزیل نے انھوں نے عبداللھ سے نقل کیا ، انھوں نے فرمایا حضرت عبداللھ رضی اللھ عنھ نے فرمایا مسلمان سائبھ نھیں بناتے اور دور جاھلیت میں مشرکین سائبھ بناتے تھے ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 85 Hadith no 6753
Web reference: Sahih Bukhari Volume 8 Book 80 Hadith no 745


حَدَّثَنَا مُوسَى، حَدَّثَنَا أَبُو عَوَانَةَ، عَنْ مَنْصُورٍ، عَنْ إِبْرَاهِيمَ، عَنِ الأَسْوَدِ، أَنَّ عَائِشَةَ ـ رضى الله عنها ـ اشْتَرَتْ بَرِيرَةَ، لِتُعْتِقَهَا، وَاشْتَرَطَ أَهْلُهَا وَلاَءَهَا فَقَالَتْ يَا رَسُولَ اللَّهِ إِنِّي اشْتَرَيْتُ بَرِيرَةَ لأُعْتِقَهَا، وَإِنَّ أَهْلَهَا يَشْتَرِطُونَ وَلاَءَهَا‏.‏ فَقَالَ ‏"‏ أَعْتِقِيهَا فَإِنَّمَا الْوَلاَءُ لِمَنْ أَعْتَقَ ‏"‏‏.‏ أَوْ قَالَ ‏"‏ أَعْطَى الثَّمَنَ ‏"‏‏.‏ قَالَ فَاشْتَرَتْهَا فَأَعْتَقَتْهَا‏.‏ قَالَ وَخُيِّرَتْ فَاخْتَارَتْ نَفْسَهَا وَقَالَتْ لَوْ أُعْطِيتُ كَذَا وَكَذَا مَا كُنْتُ مَعَهُ‏.‏ قَالَ الأَسْوَدُ وَكَانَ زَوْجُهَا حُرًّا‏.‏ قَوْلُ الأَسْوَدِ مُنْقَطِعٌ، وَقَوْلُ ابْنِ عَبَّاسٍ رَأَيْتُهُ عَبْدًا‏.‏ أَصَحُّ‏.‏

Narrated Al-Aswad: `Aisha bought Barira in order to manumit her, but her masters stipulated that her Wala' (after her death) would be for them. `Aisha said, "O Allah's Messenger (PBUH)! I have bought Barira in order to manumit her, but her masters stipulated that her Wala' will be for them." The Prophet (PBUH) said, "Manumit her as the Wala is for the one who manumits (the slave)," or said, "The one who pays her price." Then `Aisha bought and manumitted her. After that, Barira was given the choice (by the Prophet) (to stay with her husband or leave him). She said, "If he gave me so much and so much (money) I would not stay with him." (Al-Aswad added: Her husband was a free man.) The sub-narrator added: The series of the narrators of Al-Aswad's statement is incomplete. The statement of Ibn `Abbas, i.e., when I saw him he was a slave, is more authentic. ھم سے موسیٰ نے بیان کیا ، کھا ھم سے ابوعوانھ نے بیان کیا ، ان سے منصور نے ، ان سے ابراھیم نے ، ان سے اسود نے اور ان سے عائشھ رضی اللھ عنھا نے کھ بریرھ کو انھوں نے آزاد کرنے کے لیے خریدنا چاھا لیکن ان کے نائکوں نے اپنے ولاء کی شرط لگا دی عائشھ رضی اللھ عنھا نے کھا یا رسول اللھ ! میں نے آزاد کرنے کے لیے بریرھ کو خریدنا چاھا لیکن ان کے مالکوں نے اپنے لیے ان کی ولاء کی شرط لگا دی ھے ۔ آنحضرت صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا کھ انھیں آزاد کر دے ، ولاء تو آزاد کرنے والے کے ساتھ قائم ھوتی ھے ۔ بیان کیا کھ پھر میں نے انھیں خریدا اور آزاد کر دیا اور میں نے بریرھ کو اختیار دیا ( کھ چاھیں تو شوھر کے ساتھ رھ سکتی ھیں ورنھ علیحدھ بھی ھو سکتی ھیں ) تو انھوں نے شوھر سے علیحدگی کو پسند کیا اور کھا کھ مجھے اتنا اتنا مال بھی دیا جائے تو میں پھلے شوھر کے ساتھ نھیں رھوں گی ۔ اسود نے بیان کیا کھ ان کے شوھر آزاد تھے ۔ اسود کا قول منقطع ھے اور ابن عباس رضی اللھ عنھما کا قول صحیح ھے کھ میں نے انھیں غلام دیکھا ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 85 Hadith no 6754
Web reference: Sahih Bukhari Volume 8 Book 80 Hadith no 746



Copyrights: if you have any objection regarding any shared content on pdf9.com please click here.