Search hadith by
Hadith Book
Search Query
Search Language
English Arabic Urdu
Search Type Basic    Case Sensitive
 

Sahih Bukhari

Prophets

كتاب أحاديث الأنبياء

حَدَّثَنَا هُدْبَةُ بْنُ خَالِدٍ، حَدَّثَنَا هَمَّامٌ، حَدَّثَنَا قَتَادَةُ، عَنْ أَنَسِ بْنِ مَالِكٍ، عَنْ مَالِكِ بْنِ صَعْصَعَةَ، أَنَّ رَسُولَ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم حَدَّثَهُمْ عَنْ لَيْلَةِ أُسْرِيَ بِهِ حَتَّى أَتَى السَّمَاءَ الْخَامِسَةَ، فَإِذَا هَارُونُ قَالَ هَذَا هَارُونُ فَسَلِّمْ عَلَيْهِ‏.‏ فَسَلَّمْتُ عَلَيْهِ، فَرَدَّ ثُمَّ قَالَ مَرْحَبًا بِالأَخِ الصَّالِحِ وَالنَّبِيِّ الصَّالِحِ‏.‏ تَابَعَهُ ثَابِتٌ وَعَبَّادُ بْنُ أَبِي عَلِيٍّ عَنْ أَنَسٍ عَنِ النَّبِيِّ صلى الله عليه وسلم‏.‏

Narrated Malik bin Sasaa: Allah's Messenger (PBUH) talked to his companions about his Night Journey to the Heavens. When he reached the fifth Heaven, he met Aaron. (Gabriel said to the Prophet), "This is Aaron." The Prophet (PBUH) said, "Gabriel greeted and so did I, and he returned the greeting saying, 'Welcome, O Pious Brother and Pious Prophet." ھم سے ھدبھ بن خالد نے بیان کیا ‘ کھا ھم سے ھمام نے بیان کیا ‘ ان سے قتادھ نے بیان کیا ‘ ان سے انس بن مالک رضی اللھ عنھ نے اور ان سے حضرت مالک بن صعصعھ رضی اللھ عنھ نے کھ رسول اللھ صلی اللھ علیھ وسلم نے ان سے اس رات کے متعلق بیان کیا جس میں آپ کو معراج ھوا کھ جب آپ پانچویں آسمان پر تشریف لے گئے تو وھاں ھارون علیھ السلام سے ملے ۔ جبرائیل علیھ السلام نے بتایا کھ یھ ھارون علیھ السلام ھیں ‘ انھیں سلام کیجئے ۔ میں نے سلام کیا تو انھوں نے جواب دیتے ھوئے فرمایا ‘ خوش آمدید ‘ صالح بھائی اور صالح نبی ۔ اس حدیث کو قتادھ کے ساتھ ثابت بنانی اور عباد بن ابی علی نے بھی انس رضی اللھ عنھ سے ‘ انھوں نے آنحضرت صلی اللھ علیھ وسلم سے روایت کیا ھے ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 60 Hadith no 3393
Web reference: Sahih Bukhari Volume 4 Book 55 Hadith no 606


حَدَّثَنَا إِبْرَاهِيمُ بْنُ مُوسَى، أَخْبَرَنَا هِشَامُ بْنُ يُوسُفَ، أَخْبَرَنَا مَعْمَرٌ، عَنِ الزُّهْرِيِّ، عَنْ سَعِيدِ بْنِ الْمُسَيَّبِ، عَنْ أَبِي هُرَيْرَةَ ـ رضى الله عنه ـ قَالَ قَالَ رَسُولُ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم لَيْلَةَ أُسْرِيَ بِهِ ‏"‏ رَأَيْتُ مُوسَى وَإِذَا رَجُلٌ ضَرْبٌ رَجِلٌ، كَأَنَّهُ مِنْ رِجَالِ شَنُوءَةَ، وَرَأَيْتُ عِيسَى، فَإِذَا هُوَ رَجُلٌ رَبْعَةٌ أَحْمَرُ كَأَنَّمَا خَرَجَ مِنْ دِيمَاسٍ، وَأَنَا أَشْبَهُ وَلَدِ إِبْرَاهِيمَ صلى الله عليه وسلم بِهِ، ثُمَّ أُتِيتُ بِإِنَاءَيْنِ، فِي أَحَدِهِمَا لَبَنٌ، وَفِي الآخَرِ خَمْرٌ فَقَالَ اشْرَبْ أَيَّهُمَا شِئْتَ‏.‏ فَأَخَذْتُ اللَّبَنَ فَشَرِبْتُهُ فَقِيلَ أَخَذْتَ الْفِطْرَةَ، أَمَا إِنَّكَ لَوْ أَخَذْتَ الْخَمْرَ غَوَتْ أُمَّتُكَ ‏"‏‏.‏


Chapter: The Statement of Allah Taa'la: "And to Moses Allah spoke directly."

Narrated Abu Huraira: Allah's Messenger (PBUH) said, "On the night of my Ascension to Heaven, I saw (the prophet) Moses who was a thin person with lank hair, looking like one of the men of the tribe of Shanua; and I saw Jesus who was of average height with red face as if he had just come out of a bathroom. And I resemble prophet Abraham more than any of his offspring does. Then I was given two cups, one containing milk and the other wine. Gabriel said, 'Drink whichever you like.' I took the milk and drank it. Gabriel said, 'You have accepted what is natural, (True Religion i.e. Islam) and if you had taken the wine, your followers would have gone astray.' " ھم سے ابراھیم بن موسیٰ نے بیان کیا ‘ کھا ھم کو ھشام بن یوسف نے خبر دی ‘ کھا ھم کومعمر نے خبر دی ‘ انھیں زھری نے ‘ انھیں سعید بن مسیب نے اور ان سے حضرت ابوھریرھ رضی اللھ عنھ نے بیان کیا کھ رسول اللھ صلی اللھ علیھ وسلم نے اس رات کی کیفیت بیان کی جس میں آپ کو معراج ھوا کھ میں نے موسیٰ علیھ السلام کو دیکھا کھ وھ ایک دبلے پتلے سیدھے بالوں والے آدمی ھیں ۔ ایسا معلوم ھوتا تھا کھ قبیلھ شنوھ میں سے ھوں اور میں نے عیسیٰ علیھ السلام کو بھی دیکھا ‘ وھ میانھ قد اور نھایت سرخ و سفید رنگ والے تھے ۔ ایسے تروتازھ اور پاک و صاف کھ معلوم ھوتا تھا کھ ابھی غسل خانھ سے نکلے ھیں اور میں ابرھیم علیھ السلام سے ان کی اولاد میں سب سے زیادھ مشابھ ھوں ۔ پھر دو برتن میرے سامنے لائے گئے ۔ ایک میں دودھ تھا اور دوسرے میں شراب تھی ۔ جبرائیل علیھ السلام نے کھا کھ دونوں چیزوں میں سے آپ کا جو جی چاھے پیجئے ‘ میں نے دودھ کا پیالھ اپنے ھاتھ میں لے لیا اور اسے پی گیا ۔ مجھ سے کھا گیا کھ آپ نے فطرت کو اختیار کیا ( دودھ آدمی کی پیدائشی غذا ھے ) اگر اس کے بجائے آپ نے شراب پی ھوتی تو آپ کی امت گمراھ ھو جاتی ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 60 Hadith no 3394
Web reference: Sahih Bukhari Volume 4 Book 55 Hadith no 607


حَدَّثَنِي مُحَمَّدُ بْنُ بَشَّارٍ، حَدَّثَنَا غُنْدَرٌ، حَدَّثَنَا شُعْبَةُ، عَنْ قَتَادَةَ، قَالَ سَمِعْتُ أَبَا الْعَالِيَةِ، حَدَّثَنَا ابْنُ عَمِّ، نَبِيِّكُمْ ـ يَعْنِي ابْنَ عَبَّاسٍ ـ عَنِ النَّبِيِّ صلى الله عليه وسلم قَالَ ‏"‏ لاَ يَنْبَغِي لِعَبْدٍ أَنْ يَقُولَ أَنَا خَيْرٌ مِنْ يُونُسَ بْنِ مَتَّى ‏"‏‏.‏ وَنَسَبَهُ إِلَى أَبِيهِ‏.‏ وَذَكَرَ النَّبِيُّ صلى الله عليه وسلم لَيْلَةَ أُسْرِيَ بِهِ فَقَالَ ‏"‏ مُوسَى آدَمُ طُوَالٌ كَأَنَّهُ مِنْ رِجَالِ شَنُوءَةَ ‏"‏‏.‏ وَقَالَ ‏"‏ عِيسَى جَعْدٌ مَرْبُوعٌ ‏"‏‏.‏ وَذَكَرَ مَالِكًا خَازِنَ النَّارِ، وَذَكَرَ الدَّجَّالَ‏.‏

Narrated Ibn `Abbas: The Prophet (PBUH) said, "One should not say that I am better than Jonah (i.e. Yunus) bin Matta." So, he mentioned his father Matta. The Prophet (PBUH) mentioned the night of his Ascension and said, "The prophet Moses was brown, a tall person as if from the people of the tribe of Shanu'a. Jesus was a curly-haired man of moderate height." He also mentioned Malik, the gate-keeper of the (Hell) Fire, and Ad-Dajjal. مجھ سے محمد بن بشار نے بیان کیا ‘ کھا ھم سے غندر نے بیان کیا ‘ ان سے شعبھ نے بیان کیا ‘ ان سے قتادھ نے بیان کیا ‘ ان سے ابوالعالیھ نے بیان کیا اور ان سے تمھارے نبی کے چچا زاد بھائی یعنی حضرت ابن عباس رضی اللھ عنھما نے بیان کیا کھ نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا کسی شخص کو یوں نھ کھنا چاھئے کھ میں یونس بن متی سے بھتر ھوں ‘ حضور صلی اللھ علیھ وسلم نے ان کا نام ان کے والد کی طرف منسوب کر کے لیا ۔ اور حضور صلی اللھ علیھ وسلم نے شب معراج کا ذکر کرتے ھوئے فرمایا کھ موسیٰ علیھ السلام گندم گوں اور دراز قد تھے ۔ ایسا معلوم ھوتا تھا جیسے قبیلھ شنوھ کے کوئی صاحب ھوں اور فرمایا کھ عیسیٰ علیھ السلام گھنگریالے بال والے اور میانھ قد کے تھے اور حضور صلی اللھ علیھ وسلم نے داروغھ جھنم مالک کا بھی ذکر فرمایا اور دجال کا بھی ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 60 Hadith no 3395, 3396
Web reference: Sahih Bukhari Volume 4 Book 55 Hadith no 608


حَدَّثَنَا عَلِيُّ بْنُ عَبْدِ اللَّهِ، حَدَّثَنَا سُفْيَانُ، حَدَّثَنَا أَيُّوبُ السَّخْتِيَانِيُّ، عَنِ ابْنِ سَعِيدِ بْنِ جُبَيْرٍ، عَنْ أَبِيهِ، عَنِ ابْنِ عَبَّاسٍ ـ رضى الله عنهما أَنَّ النَّبِيَّ صلى الله عليه وسلم لَمَّا قَدِمَ الْمَدِينَةَ وَجَدَهُمْ يَصُومُونَ يَوْمًا، يَعْنِي عَاشُورَاءَ، فَقَالُوا هَذَا يَوْمٌ عَظِيمٌ، وَهْوَ يَوْمٌ نَجَّى اللَّهُ فِيهِ مُوسَى، وَأَغْرَقَ آلَ فِرْعَوْنَ، فَصَامَ مُوسَى شُكْرًا لِلَّهِ‏.‏ فَقَالَ ‏"‏ أَنَا أَوْلَى بِمُوسَى مِنْهُمْ ‏"‏‏.‏ فَصَامَهُ وَأَمَرَ بِصِيَامِهِ‏.‏

Narrated Ibn `Abbas: When the Prophet (PBUH) came to Medina, he found (the Jews) fasting on the day of 'Ashura' (i.e. 10th of Muharram). They used to say: "This is a great day on which Allah saved Moses and drowned the folk of Pharaoh. Moses observed the fast on this day, as a sign of gratitude to Allah." The Prophet (PBUH) said, "I am closer to Moses than they." So, he observed the fast (on that day) and ordered the Muslims to fast on it. ھم سے علی بن عبداللھ نے بیان کیا ‘ کھا ھم سے سفیان بن عیینھ نے بیان کیا ‘ کھا ھم سے ایوب سختیانی نے بیان کیا ‘ ان سے سعید بن جبیر کے صاحبزادے ( عبداللھ ) نے اپنے والد سے اور ان سے ابن عباس رضی اللھ عنھما نے کھ جب نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم مدینھ تشریف لائے تو وھاں کے لوگ ایک دن یعنی عاشورا کے دن روزھ رکھتے تھے ۔ ان لوگوں ( یھودیوں ) نے بتایا کھ یھ بڑی عظمت والا دن ھے ‘ اسی دن اللھ تعالیٰ نے موسیٰ علیھ السلام کو نجات دی تھی اور آل فرعون کو غرق کیا تھا ۔ اس کے شکر میں موسیٰ علیھ السلام نے اس دن کا روزھ رکھا تھا ۔ حضور صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا کھ میں موسیٰ علیھ السلام کا ان سے زیادھ قریب ھوں ۔ چنانچھ آپ نے خود بھی اس دن کا روزھ رکھنا شروع کیا اور صحابھ کو بھی اس کا حکم فرمایا ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 60 Hadith no 3397
Web reference: Sahih Bukhari Volume 4 Book 55 Hadith no 609


حَدَّثَنَا مُحَمَّدُ بْنُ يُوسُفَ، حَدَّثَنَا سُفْيَانُ، عَنْ عَمْرِو بْنِ يَحْيَى، عَنْ أَبِيهِ، عَنْ أَبِي سَعِيدٍ ـ رضى الله عنه ـ عَنِ النَّبِيِّ صلى الله عليه وسلم قَالَ ‏"‏ النَّاسُ يَصْعَقُونَ يَوْمَ الْقِيَامَةِ، فَأَكُونُ أَوَّلَ مَنْ يُفِيقُ، فَإِذَا أَنَا بِمُوسَى آخِذٌ بِقَائِمَةٍ مِنْ قَوَائِمِ الْعَرْشِ، فَلاَ أَدْرِي أَفَاقَ قَبْلِي، أَمْ جُوزِيَ بِصَعْقَةِ الطُّورِ ‏"‏‏.‏

Narrated Abu Sa`id: The Prophet (PBUH) said, 'People will be struck unconscious on the Day of Resurrection and I will be the first to regain consciousness, and behold! There I will see Moses holding one of the pillars of Allah's Throne. I will wonder whether he has become conscious before me of he has been exempted, because of his unconsciousness at the Tur (mountain) which he received (on the earth). ھم سے محمد بن یوسف بیکندی نے بیان کیا ‘ کھا ھم سے سفیان بن عیینھ نے ‘ ان سے عمرو بن یحییٰ نے ‘ ان سے ان کے والد یحییٰ بن عمارھ نے اور ان سے ابو سعید خدری رضی اللھ عنھ نے کھ نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا ‘ قیامت کے دن سب لوگ بیھوش ھو جائیں گے ‘ پھر سب سے پھلے میں ھوش میں آؤں گا اور دیکھوں گا کھ موسیٰ عرش کے پایوں میں سے ایک پایھ تھامے ھوئے ھیں ۔ اب مجھے یھ معلوم نھیں کھ وھ مجھ سے پھلے ھوش میں آ گئے ھوں گے یا ( بیھوش ھی نھیں کئے گئے ھوں گے بلکھ ) انھیں کوھ طور کی بے ھوشی کا بدلھ ملا ھو گا ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 60 Hadith no 3398
Web reference: Sahih Bukhari Volume 4 Book 55 Hadith no 610


حَدَّثَنِي عَبْدُ اللَّهِ بْنُ مُحَمَّدٍ الْجُعْفِيُّ، حَدَّثَنَا عَبْدُ الرَّزَّاقِ، أَخْبَرَنَا مَعْمَرٌ، عَنْ هَمَّامٍ، عَنْ أَبِي هُرَيْرَةَ ـ رضى الله عنه ـ قَالَ قَالَ النَّبِيُّ صلى الله عليه وسلم ‏"‏ لَوْلاَ بَنُو إِسْرَائِيلَ لَمْ يَخْنَزِ اللَّحْمُ، وَلَوْلاَ حَوَّاءُ لَمْ تَخُنْ أُنْثَى زَوْجَهَا الدَّهْرَ ‏"‏‏.‏

Narrated Abu Huraira: The Prophet (PBUH) said, "Were it not for Bani Israel, meat would not decay; and were it not for Eve, no woman would ever betray her husband." مجھ سے عبداللھ بن محمد جعفی نے بیان کیا ‘ کھا ھم سے عبدالرزاق نے بیان کیا ‘ کھا ھم کو معمر نے خبر دی ‘ انھیں ھمام نے اور ان سے ابوھریرھ رضی اللھ عنھ نے بیان کیا کھ نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا اگر بنی اسرائیل نھ ھوتے ( سلویٰ کا گوشت جمع کر کے نھ رکھتے ) تو گوشت کبھی نھ سڑتا ۔ اور اگر حوانھ ھوتیں ( یعنی حضرت آدم علیھ السلام سے دغا نھ کرتیں ) تو کوئی عورت اپنے شوھر کی خیانت کبھی نھ کرتی ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 60 Hadith no 3399
Web reference: Sahih Bukhari Volume 4 Book 55 Hadith no 611



@2019 Copyrights: if you have any objection regarding any shared content on pdf9.com please click here.