Search hadith by
Hadith Book
Search Query
Search Language
English Arabic Urdu
Search Type Basic    Case Sensitive
 

Sahih Bukhari

Hajj (Pilgrimage)

كتاب الحج

حَدَّثَنَا عَبْدُ الْعَزِيزِ بْنُ عَبْدِ اللَّهِ، حَدَّثَنَا إِبْرَاهِيمُ بْنُ سَعْدٍ، عَنِ الزُّهْرِيِّ، عَنْ سَعِيدِ بْنِ الْمُسَيَّبِ، عَنْ أَبِي هُرَيْرَةَ ـ رضى الله عنه ـ قَالَ سُئِلَ النَّبِيُّ صلى الله عليه وسلم أَىُّ الأَعْمَالِ أَفْضَلُ قَالَ ‏"‏ إِيمَانٌ بِاللَّهِ وَرَسُولِهِ ‏"‏‏.‏ قِيلَ ثُمَّ مَاذَا قَالَ ‏"‏ جِهَادٌ فِي سَبِيلِ اللَّهِ ‏"‏‏.‏ قِيلَ ثُمَّ مَاذَا قَالَ ‏"‏ حَجٌّ مَبْرُورٌ ‏"‏‏.‏


Chapter: The superiority of Al-Hajj-ul-Mabrur

Narrated Abu Huraira: The Prophet (PBUH) was asked, "Which is the best deed?" He said, "To believe in Allah and His Apostle." He was then asked, "Which is the next (in goodness)?" He said, "To participate in Jihad in Allah's Cause." He was then asked, "Which is the next?" He said, "To perform Hajj-Mabrur. " ھم سے عبدالعزیز بن عبداللھ نے بیان کیا ، انھوں نے کھا کھ ھم سے ابراھیم بن سعد نے بیان کیا ، انھوں نے کھا کھ ھم سے زھری نے بیان کیا ، ان سے سعید بن مسیب نے بیان کیا اور ان سے ابوھریرھ رضی اللھ عنھ نے کھ نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم سے کسی نے پوچھا کھ کون سا کام بھتر ھے ؟ آپ صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا کھ اللھ اور اس کے رسول پر ایمان لانا ۔ پوچھا گیا کھ پھر اس کے بعد ؟ آپ صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا کھ اللھ کے راستے میں جھاد کرنا ۔ پھر پوچھا گیا کھ پھر اس کے بعد ؟ آپ صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا کھ حج مبرور ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 25 Hadith no 1519
Web reference: Sahih Bukhari Volume 2 Book 26 Hadith no 594


حَدَّثَنَا عَبْدُ الرَّحْمَنِ بْنُ الْمُبَارَكِ، حَدَّثَنَا خَالِدٌ، أَخْبَرَنَا حَبِيبُ بْنُ أَبِي عَمْرَةَ، عَنْ عَائِشَةَ بِنْتِ طَلْحَةَ، عَنْ عَائِشَةَ أُمِّ الْمُؤْمِنِينَ ـ رضى الله عنها ـ أَنَّهَا قَالَتْ يَا رَسُولَ اللَّهِ، نَرَى الْجِهَادَ أَفْضَلَ الْعَمَلِ، أَفَلاَ نُجَاهِدُ قَالَ ‏"‏ لاَ، لَكِنَّ أَفْضَلَ الْجِهَادِ حَجٌّ مَبْرُورٌ ‏"‏‏.‏

Narrated `Aisha: (the mother of the faithful believers) I said, "O Allah's Messenger (PBUH)! We consider Jihad as the best deed." The Prophet (PBUH) said, "The best Jihad (for women) is Hajj Mabrur. " ھم سے عبدالرحمٰن بن مبارک نے بیان کیا ، انھوں نے کھا کھ ھم سے خالد بن عبداللھ طحان نے بیان کیا ، انھوں نے کھا کھ ھمیں حبیب بن ابی عمرھ نے خبر دی ، انھیں عائشھ بنت طلحھ نے اور انھیں ام المؤمنین حضرت عائشھ صدیقھ رضی اللھ عنھا نے کھا کھ انھوں نے پوچھا یا رسول اللھ ! ھم دیکھتے ھیں کھ جھاد سب نیک کاموں سے بڑھ کر ھے ۔ پھر ھم بھی کیوں نھ جھاد کریں ؟ حضور صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا کھ نھیں بلکھ سب سے افضل جھاد حج ھے جو مبرور ھو ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 25 Hadith no 1520
Web reference: Sahih Bukhari Volume 2 Book 26 Hadith no 595


حَدَّثَنَا آدَمُ، حَدَّثَنَا شُعْبَةُ، حَدَّثَنَا سَيَّارٌ أَبُو الْحَكَمِ، قَالَ سَمِعْتُ أَبَا حَازِمٍ، قَالَ سَمِعْتُ أَبَا هُرَيْرَةَ ـ رضى الله عنه ـ قَالَ سَمِعْتُ النَّبِيَّ صلى الله عليه وسلم يَقُولُ ‏"‏ مَنْ حَجَّ لِلَّهِ فَلَمْ يَرْفُثْ وَلَمْ يَفْسُقْ رَجَعَ كَيَوْمِ وَلَدَتْهُ أُمُّهُ ‏"‏‏.‏

Narrated Abu Huraira: The Prophet (p.b.u.h) said, "Whoever performs Hajj for Allah's pleasure and does not have sexual relations with his wife, and does not do evil or sins then he will return (after Hajj free from all sins) as if he were born anew." ھم سے آدم بن ابی ایاس نے بیان کیا ، کھا کھ ھم سے شعبھ نے بیان کیا ، کھا کھ ھم سے سیارابوالحکم نے بیان کیا ، کھا کھ میں نے ابو حزم سے سنا ، انھوں نے بیان کیا کھ میں نے ابوھریرھ رضی اللھ عنھ سے سنا اور انھوں نے نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم سے سنا کھ آپ صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا جس شخص نے اللھ کے لیے اس شان کے ساتھ حج کیا کھ نھ کوئی فحش بات ھوئی اور نھ کوئی گناھ تو وھ اس دن کی طرح واپس ھو گا جیسے اس کی ماں نے اسے جنا تھا ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 25 Hadith no 1521
Web reference: Sahih Bukhari Volume 2 Book 26 Hadith no 596


حَدَّثَنَا مَالِكُ بْنُ إِسْمَاعِيلَ، حَدَّثَنَا زُهَيْرٌ، قَالَ حَدَّثَنِي زَيْدُ بْنُ جُبَيْرٍ، أَنَّهُ أَتَى عَبْدَ اللَّهِ بْنَ عُمَرَ ـ رضى الله عنهما ـ فِي مَنْزِلِهِ وَلَهُ فُسْطَاطٌ وَسُرَادِقٌ، فَسَأَلْتُهُ مِنْ أَيْنَ يَجُوزُ أَنْ أَعْتَمِرَ قَالَ فَرَضَهَا رَسُولُ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم لأَهْلِ نَجْدٍ قَرْنًا، وَلأَهْلِ الْمَدِينَةِ ذَا الْحُلَيْفَةِ، وَلأَهْلِ الشَّأْمِ الْجُحْفَةَ‏.‏


Chapter: The demarcation of Mawaqit for Hajj

Narrated Zaid bin Jubair: I went to visit `Abdullah bin `Umar at his house which contained many tents made of cotton cloth and these were encircled with Suradik (part of the tent). I asked him from where, should one assume Ihram for Umra. He said, "Allah's Messenger (PBUH) had fixed as Miqat (singular of Mawaqit) Qarn for the people of Najd, Dhul-Hulaifa for the people of Medina, and Al-Juhfa for the people of Sham." ھم سے مالک بن اسماعیل نے بیان کیا ، انھوں نے کھا کھ ھم سے زھیر نے بیان کیا ، انھوں نے کھا کھ مجھ سے زید بن جبیر نے بیان کیا کھ وھ عبداللھ بن عمر رضی اللھ عنھما کی قیام گاھ پر حاضر ھوئے ۔ وھاں قنات کے ساتھ شامیانھ لگا ھوا تھا ( زید بن جبیر نے کھا کھ ) میں نے پوچھا کھ کس جگھ سے عمرھ کا احرام باندھنا چاھئے ۔ عبداللھ رضی اللھ عنھ نے جواب دیا کھ رسول صلی اللھ علیھ وسلم نے نجد والوں کے لیے قرن ، مدینھ والوں کے لیے ذولحلیفھ اور شام والوں کے لیے حجفھ مقرر کیا ھے ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 25 Hadith no 1522
Web reference: Sahih Bukhari Volume 2 Book 26 Hadith no 597


حَدَّثَنَا يَحْيَى بْنُ بِشْرٍ، حَدَّثَنَا شَبَابَةُ، عَنْ وَرْقَاءَ، عَنْ عَمْرِو بْنِ دِينَارٍ، عَنْ عِكْرِمَةَ، عَنِ ابْنِ عَبَّاسٍ ـ رضى الله عنهما ـ قَالَ كَانَ أَهْلُ الْيَمَنِ يَحُجُّونَ وَلاَ يَتَزَوَّدُونَ وَيَقُولُونَ نَحْنُ الْمُتَوَكِّلُونَ، فَإِذَا قَدِمُوا مَكَّةَ سَأَلُوا النَّاسَ، فَأَنْزَلَ اللَّهُ تَعَالَى ‏{‏وَتَزَوَّدُوا فَإِنَّ خَيْرَ الزَّادِ التَّقْوَى‏}‏‏.‏ رَوَاهُ ابْنُ عُيَيْنَةَ عَنْ عَمْرٍو عَنْ عِكْرِمَةَ مُرْسَلاً‏.‏


Chapter: The Statement of Allah Ta'ala

Narrated Ibn `Abbas: The people of Yemen used to come for Hajj and used not to bring enough provisions with them and used to say that they depend on Allah. On their arrival in Medina they used to beg the people, and so Allah revealed, "And take a provision (with you) for the journey, but the best provision is the fear of Allah." (2.197). ھم سے یحییٰ بن بشر نے بیان کیا ، انھوں نے کھا کھ ھم سے شبابھ بن سوار نے بیان کیا ، ان سے ورقاء بن عمرو نے ، ان سے عمرو بن دینار نے ، ان سے عکرمھ نے بیان کیا اور ان سے حضرت عبداللھ بن عباس رضی اللھ عنھما نے بیان کیا کھ یمن کے لوگ راستھ کا خرچ ساتھ لائے بغیر حج کے لیے آ جاتے تھے ۔ کھتے تو یھ تھے کھ ھم توکل کرتے ھیں لیکن جب مکھ آتے تو لوگوں سے مانگنے لگتے ۔ اس پر اللھ تعالیٰ نے یھ آیت نازل فرمائی ” اور توشھ لے لیا کرو کھ سب سے بھتر توشھ تو تقویٰ ھی ھے ۔ “ اس کو ابن عیینھ نے عمرو سے بواسطھ عکرمھ مرسلاً نقل کیا ھے ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 25 Hadith no 1523
Web reference: Sahih Bukhari Volume 2 Book 26 Hadith no 598


حَدَّثَنَا مُوسَى بْنُ إِسْمَاعِيلَ، حَدَّثَنَا وُهَيْبٌ، حَدَّثَنَا ابْنُ طَاوُسٍ، عَنْ أَبِيهِ، عَنِ ابْنِ عَبَّاسٍ، قَالَ إِنَّ النَّبِيَّ صلى الله عليه وسلم وَقَّتَ لأَهْلِ الْمَدِينَةِ ذَا الْحُلَيْفَةِ، وَلأَهْلِ الشَّأْمِ الْجُحْفَةَ، وَلأَهْلِ نَجْدٍ قَرْنَ الْمَنَازِلِ، وَلأَهْلِ الْيَمَنِ يَلَمْلَمَ، هُنَّ لَهُنَّ وَلِمَنْ أَتَى عَلَيْهِنَّ مِنْ غَيْرِهِنَّ، مِمَّنْ أَرَادَ الْحَجَّ وَالْعُمْرَةَ، وَمَنْ كَانَ دُونَ ذَلِكَ فَمِنْ حَيْثُ أَنْشَأَ، حَتَّى أَهْلُ مَكَّةَ مِنْ مَكَّةَ‏.‏


Chapter: Miqat of Hajj and 'Umra for the people of Makkah

Narrated Ibn `Abbas: Allah's Messenger (PBUH) (p.b.u.h) made Dhul-Huiaifa as the Miqat for the people of Medina; Al-Juhfa for the people of Sham; Qarn-al-Manazil for the people of Najd; and Yalamlam for the people of Yemen; and these Mawaqit are for the people at those very places, and besides them for those who come thorough those places with the intention of performing Hajj and `Umra; and whoever is living within these boundaries can assume lhram from the place he starts, and the people of Mecca can assume Ihram from Mecca. ھم سے موسیٰ بن اسماعیل نے بیان کیا ، کھا کھ ھم سے وھیب نے بیان کیا ، کھا کھ ھم سے عبداللھ بن طاؤس نے بیان کیا ، ان سے ان کے باپ نے اور ان سے ابن عباس رضی اللھ عنھما نے کھ نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم نے مدینھ والوں کے احرام کے لیے ذوالحلیفھ ، شام والوں کے لیے حجفھ ، نجد والوں کے قرن منزل ، یمن والوں کے یلملم متعین کیا ۔ یھاں سے ان مقامات والے بھی احرام باندھیں اور ان کے علاوھ وھ لوگ بھی جو ان راستوں سے آئیں اور حج یا عمرھ کا ارادھ رکھتے ھوں ۔ لیکن جن کا قیام میقات اور مکھ کے درمیان ھے تو وھ احرام اسی جگھ سے باندھیں جھاں سے انھیں سفر شروع کرنا ھے ۔ یھاں تک کھ مکھ کے لوگ مکھ ھی سے احرام باندھیں ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 25 Hadith no 1524
Web reference: Sahih Bukhari Volume 2 Book 26 Hadith no 599



@2019 Copyrights: if you have any objection regarding any shared content on pdf9.com please click here.