Search hadith by
Hadith Book
Search Query
Search Language
English Arabic Urdu
Search Type Basic    Case Sensitive
 

Sahih Bukhari

Invocations

كتاب الدعوات

حَدَّثَنَا مُحَمَّدُ بْنُ الْمُثَنَّى، حَدَّثَنَا الأَنْصَارِيُّ، حَدَّثَنَا هِشَامُ بْنُ حَسَّانَ، حَدَّثَنَا مُحَمَّدُ بْنُ سِيرِينَ، حَدَّثَنَا عَبِيدَةُ، حَدَّثَنَا عَلِيُّ بْنُ أَبِي طَالِبٍ ـ رضى الله عنه ـ قَالَ كُنَّا مَعَ النَّبِيِّ صلى الله عليه وسلم يَوْمَ الْخَنْدَقِ، فَقَالَ ‏"‏ مَلأَ اللَّهُ قُبُورَهُمْ وَبُيُوتَهُمْ نَارًا، كَمَا شَغَلُونَا عَنْ صَلاَةِ الْوُسْطَى حَتَّى غَابَتِ الشَّمْسُ ‏"‏‏.‏ وَهْىَ صَلاَةُ الْعَصْرِ‏.‏

Narrated `Ali bin Abi Talib: We were in the company of the Prophet (PBUH) on the day (of the battle) of Al-Khandaq (the Trench). The Prophet said, "May Allah fill their (the infidels') graves and houses with fire, as they have kept us so busy that we could not offer the middle prayer till the sun had set; and that prayer was the `Asr prayer." ھم سے محمد بن مثنی ٰ نے بیان کیا ، انھوں نے کھا ھم سے انصاری نے بیان کیا ، ان سے ھشام بن حسان نے بیان کیا ، کھا ھم سے محمد بن سیرین نے بیان کیا ، ان سے عبیدھ نے بیان کیا ، کھا ھم سے حضرت علی بن ابی طالب رضی اللھ عنھ نے بیان کیاکھ غزوھ خندق کے موقع پر ھم رسول اللھ صلی اللھ علیھ وسلم کے ساتھ تھے ۔ آنحضرت صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا اللھ ان کی قبروں اور ان کے گھر وں کو آگ سے بھر دے ۔ انھوں نے ھمیں ( عصر کی نماز ) صلاۃ وسطیٰ نھیں پڑھنے دی ۔ جب تک کھ سورج غروب ھو گیا اور یھ عصر کی نماز تھی ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 80 Hadith no 6396
Web reference: Sahih Bukhari Volume 8 Book 75 Hadith no 405


حَدَّثَنَا عَلِيٌّ، حَدَّثَنَا سُفْيَانُ، حَدَّثَنَا أَبُو الزِّنَادِ، عَنِ الأَعْرَجِ، عَنْ أَبِي هُرَيْرَةَ ـ رضى الله عنه ـ قَدِمَ الطُّفَيْلُ بْنُ عَمْرٍو عَلَى رَسُولِ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم فَقَالَ يَا رَسُولَ اللَّهِ إِنَّ دَوْسًا قَدْ عَصَتْ وَأَبَتْ، فَادْعُ اللَّهَ عَلَيْهَا‏.‏ فَظَنَّ النَّاسُ أَنَّهُ يَدْعُو عَلَيْهِمْ، فَقَالَ ‏"‏ اللَّهُمَّ اهْدِ دَوْسًا وَأْتِ بِهِمْ ‏"‏‏.‏


Chapter: Invocation in favor of Mushrikun

Narrated Abu Huraira: at-Tufail bin `Amr came to Allah's Messenger (PBUH) and said, "O Allah's Messenger (PBUH)! The tribe of Daus has disobeyed (Allah and His Apostle) and refused (to embrace Islam), therefore, invoke Allah's wrath for them." The people thought that the Prophet (PBUH) would invoke Allah's wrath for them, but he said, "O Allah! Guide the tribe Of Daus and let them come to us." ھم سے علی نے بیان کیا ، ان سے سفیان نے کھا ، ان سے ابوالزناد نے ، ان سے اعرج نے اور ان سے حضرت ابوھریرھ رضی اللھ عنھ نے بیان کیا کھ طفیل بن عمر و رضی اللھ عنھ رسول اللھ صلی اللھ علیھ وسلم کی خدمت میں حاضر ھوئے اور عرض کیا یا رسول اللھ ! قبیلھ دوس نے نافرمانی اور سرکشی کی ھے ، آپ ان کے لئے بددعا کیجئے ۔ لوگوں نے سمجھا کھ آنحضرت صلی اللھ علیھ وسلم ان کے لئے بددعا ھی کریں گے لیکن آنحضرت صلی اللھ علیھ وسلم نے دعا کی کھ ” اے اللھ ! قبیلھ دوس کو ھدایت دے اور انھیں ( میرے پاس ) بھیج دے “ ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 80 Hadith no 6397
Web reference: Sahih Bukhari Volume 8 Book 75 Hadith no 406


حَدَّثَنَا مُحَمَّدُ بْنُ بَشَّارٍ، حَدَّثَنَا عَبْدُ الْمَلِكَ بْنُ صَبَّاحٍ، حَدَّثَنَا شُعْبَةُ، عَنْ أَبِي إِسْحَاقَ، عَنِ ابْنِ أَبِي مُوسَى، عَنْ أَبِيهِ، عَنِ النَّبِيِّ صلى الله عليه وسلم أَنَّهُ كَانَ يَدْعُو بِهَذَا الدُّعَاءِ ‏"‏ رَبِّ اغْفِرْ لِي خَطِيئَتِي وَجَهْلِي وَإِسْرَافِي فِي أَمْرِي كُلِّهِ، وَمَا أَنْتَ أَعْلَمُ بِهِ مِنِّي، اللَّهُمَّ اغْفِرْ لِي خَطَايَاىَ وَعَمْدِي وَجَهْلِي وَهَزْلِي، وَكُلُّ ذَلِكَ عِنْدِي، اللَّهُمَّ اغْفِرْ لِي مَا قَدَّمْتُ وَمَا أَخَّرْتُ وَمَا أَسْرَرْتُ وَمَا أَعْلَنْتُ، أَنْتَ الْمُقَدِّمُ، وَأَنْتَ الْمُؤَخِّرُ، وَأَنْتَ عَلَى كُلِّ شَىْءٍ قَدِيرٌ ‏"‏‏.‏ وَقَالَ عُبَيْدُ اللَّهِ بْنُ مُعَاذٍ وَحَدَّثَنَا أَبِي، حَدَّثَنَا شُعْبَةُ، عَنْ أَبِي إِسْحَاقَ، عَنْ أَبِي بُرْدَةَ بْنِ أَبِي مُوسَى، عَنْ أَبِيهِ، عَنِ النَّبِيِّ صلى الله عليه وسلم‏ بِنَحْوِهِ.‏


Chapter: "O Allah! Forgive my past and future sins."

Narrated Abu Musa: The Prophet (PBUH) used to invoke Allah with the following invocation: 'Rabbi-ghfir-li Khati 'ati wa jahli wa israfi fi `Amri kullihi, wa ma anta a'lamu bihi minni. Allahumma ighfirli khatayaya wa 'amdi, wa jahli wa jiddi, wa kullu dhalika'indi. Allahumma ighrifli ma qaddamtu wa ma akhartu wa ma asrartu wa ma a'lantu. Anta-l-muqaddimu wa anta-l-mu'akh-khiru, wa anta 'ala kulli shai'in qadir.' ھم سے محمد بن بشار نے بیان کیا ، کھا ھم سے عبدالملک بن صباح نے بیان کیا ، ان سے شعبھ نے ، ان سے ابواسحاق نے ، ان سے ابن ابی موسیٰ نے ، ان سے ان کے والد نے کھ نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلمیھ دعا کرتے تھے ” میرے رب ! میری خطا ، میری نادانی اور تمام معاملات میں میرے حدسے تجاوز کرنے میں میری مغفرت فرما اور وھ گناھ بھی جن کو تو مجھ سے زیادھ جاننے والا ھے ۔ اے اللھ ! میری مغفرت کر ، میری خطاؤں میں ، میرے بالا ارادھ اور بلا ارادھ کاموں میں اور میرے ھنسی مزاح کے کاموں میں اور یھ سب میری ھی طرف سے ھیں ۔ اے اللھ ! میری مغفرت کر ان کاموں میں جو میں کر چکا ھوں اور انھیں جو کروں گا اور جنھیں میں نے چھپایا اور جنھیں میں نے ظاھر کیا ھے ، تو سب سے پھلے ھے اور تو ھی سب سے بعد میں ھے اور تو ھر چیز پر قدرت رکھنے والا ھے “ اور عبیداللھ بن معاذ ( جو امام بخاری کے شیخ ھیں ) نے بیان کیا کھ ھم سے میرے والد نے بیان کیا کھا ھم سے شعبھ نے بیان کیا ، ان سے ابواسحاق نے ، ان سے ابوبردھ بن ابی موسیٰ نے اور ان سے ان کے والد نے اور ان سے نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم نے ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 80 Hadith no 6398
Web reference: Sahih Bukhari Volume 8 Book 75 Hadith no 407


حَدَّثَنَا مُحَمَّدُ بْنُ الْمُثَنَّى، حَدَّثَنَا عُبَيْدُ اللَّهِ بْنُ عَبْدِ الْمَجِيدِ، حَدَّثَنَا إِسْرَائِيلُ، حَدَّثَنَا أَبُو إِسْحَاقَ، عَنْ أَبِي بَكْرِ بْنِ أَبِي مُوسَى، وَأَبِي، بُرْدَةَ ـ أَحْسِبُهُ ـ عَنْ أَبِي مُوسَى الأَشْعَرِيِّ، عَنِ النَّبِيِّ صلى الله عليه وسلم أَنَّهُ كَانَ يَدْعُو ‏"‏ اللَّهُمَّ اغْفِرْ لِي خَطِيئَتِي وَجَهْلِي وَإِسْرَافِي فِي أَمْرِي، وَمَا أَنْتَ أَعْلَمُ بِهِ مِنِّي، اللَّهُمَّ اغْفِرْ لِي هَزْلِي وَجِدِّي وَخَطَاىَ وَعَمْدِي، وَكُلُّ ذَلِكَ عِنْدِي ‏"‏‏.‏

Narrated Abu Musa Al-Ash`ari: The Prophet (PBUH) used to invoke Allah, saying, "Allahumma ighfirli khati'ati wa jahli wa israfi fi `Amri, wa ma anta a-'lamu bihi minni. Allahumma ighfirli hazali wa jiddi wa khata'i wa amdi, wa kullu dhalika 'indi." ھم سے محمد بن مثنیٰ نے بیان کیا ، کھا ھم سے عبیداللھ بن عبد المجید نے بیان کیا ، کھا ھم سے اسرائیل نے بیان کیا ، ان سے ابواسحاق نے بیان کیا ، ان سے ابوبکر بن ابی موسیٰ اور ابوبردھ نے میرا خیال ھے کھ ابوموسیٰ اشعری رضی اللھ عنھ کے حوالھ سے کھ نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم یھ دعا کیا کرتے تھے اللهم اغفرلي خطيئتي وجهلي وإسرافي في أمري ، ‏‏‏‏ وما أنت أعلم به مني ، ‏‏‏‏ اللهم اغفر لي هزلي وجدي وخطاى وعمدي ، ‏‏‏‏ وكل ذلك عندي ” اے اللھ ! میری مغفرت فرما میری خطاؤں میں ، میری نادانی میں اور میری کسی معاملھ میں زیادتی میں ، ان باتوں میں جن کا تو مجھ سے زیادھ جاننے والا ھے ۔ اے اللھ ! میری مغفرت کر میرے ھنسی مزاح اور سنجیدگی میں اور میرے ارادھ میں اور یھ سب کچھ میری ھی طرف سے ھیں ۔ “

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 80 Hadith no 6399
Web reference: Sahih Bukhari Volume 8 Book 75 Hadith no 408


حَدَّثَنَا مُسَدَّدٌ، حَدَّثَنَا إِسْمَاعِيلُ بْنُ إِبْرَاهِيمَ، أَخْبَرَنَا أَيُّوبُ، عَنْ مُحَمَّدٍ، عَنْ أَبِي هُرَيْرَةَ ـ رضى الله عنه ـ قَالَ قَالَ أَبُو الْقَاسِمِ صلى الله عليه وسلم ‏"‏ فِي الْجُمُعَةِ سَاعَةٌ لاَ يُوَافِقُهَا مُسْلِمٌ وَهْوَ قَائِمٌ يُصَلِّي يَسْأَلُ خَيْرًا إِلاَّ أَعْطَاهُ ‏"‏‏.‏ وَقَالَ بِيَدِهِ قُلْنَا يُقَلِّلُهَا يُزَهِّدُهَا‏.‏


Chapter: To invoke Allah during a particular time on Friday

Narrated Abu Huraira: Abu-l-Qasim (the Prophet) said, "On Friday there is a particular time. If a Muslim happens to be praying and invoking Allah for something good during that time, Allah will surely fulfill his request." The Prophet (PBUH) pointed out with his hand. We thought that he wanted to illustrate how short that time was. ھم سے مسدد نے بیان کیا ، کھا ھم سے اسماعیل بن ابراھیم نے ، انھیں ایوب نے خبر دی ، انھیں محمد نے اور ان سے ابوھریرھ رضی اللھ عنھ نے بیان کیاکھ ابوالقاسم صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا ، جمعھ کے دن ایک ایسی گھڑی آتی ھے جس میں اگر کوئی مسلمان اس حال میں پالے کھ وھ کھڑا نماز پڑھ رھا ھو تو جو بھلائی بھی وھ مانگے گا اللھ عنایت فرمائے گا اور آپ نے اپنے ھاتھ سے اشاھ فرمایا اور ھم نے اس سے یھ سمجھا کھ آنحضور صلی اللھ علیھ وسلم اس گھڑی کے مختصر ھونے کی طرف اشارھ کر رھے ھیں ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 80 Hadith no 6400
Web reference: Sahih Bukhari Volume 8 Book 75 Hadith no 409


حَدَّثَنَا قُتَيْبَةُ بْنُ سَعِيدٍ، حَدَّثَنَا عَبْدُ الْوَهَّابِ، حَدَّثَنَا أَيُّوبُ، عَنِ ابْنِ أَبِي مُلَيْكَةَ، عَنْ عَائِشَةَ ـ رضى الله عنها أَنَّ الْيَهُودَ، أَتَوُا النَّبِيَّ صلى الله عليه وسلم فَقَالُوا السَّامُ عَلَيْكَ‏.‏ قَالَ ‏"‏ وَعَلَيْكُمْ ‏"‏‏.‏ فَقَالَتْ عَائِشَةُ السَّامُ عَلَيْكُمْ، وَلَعَنَكُمُ اللَّهُ وَغَضِبَ عَلَيْكُمْ‏.‏ فَقَالَ رَسُولُ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم ‏"‏ مَهْلاً يَا عَائِشَةُ، عَلَيْكِ بِالرِّفْقِ، وَإِيَّاكِ وَالْعُنْفَ أَوِ الْفُحْشَ ‏"‏‏.‏ قَالَتْ أَوَلَمْ تَسْمَعْ مَا قَالُوا قَالَ ‏"‏ أَوَلَمْ تَسْمَعِي مَا قُلْتُ رَدَدْتُ عَلَيْهِمْ، فَيُسْتَجَابُ لِي فِيهِمْ، وَلاَ يُسْتَجَابُ لَهُمْ فِيَّ ‏"‏‏.‏


Chapter: "Our invocation against the Jews will be accepted, but theirs will not be accepted."

Narrated Ibn Abi Mulaika: `Aisha said, "The Jews came to the Prophet (PBUH) and said to him, "As-Samu 'Alaika (i.e., Death be upon you)." He replied, 'The same on you.' " `Aisha said to them, "Death be upon you, and may Allah curse you and shower His wrath upon you!" Allah's Messenger (PBUH) I said, "Be gentle and calm, O `Aisha! Be gentle and beware of being harsh and of saying evil things." She said, "Didn't you hear what they said?" He said, "Didn't you hear what I replied (to them)? have returned their statement to them, and my invocation against them will be accepted but theirs against me will not be accepted." ھم سے قتیبھ بن سعید نے بیان کیا ، انھوں نے کھا ھم سے عبدالوھاب نے بیان کیا ، انھوں نے کھا ھم سے ایوب نے بیان کیا ، ان سے ابن ابی ملیکھ نے اور ان سے حضرت عائشھ رضی اللھ عنھا نے کھ یھود نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم کی خدمت میں حاضر ھوئے اور کھا ” السام علیکم “ آنحضرت صلی اللھ علیھ وسلم نے جواب دیا ” وعلیکم “ لیکن عائشھ رضی اللھ عنھا نے کھا ” السام عليكم ، ‏‏‏‏ ولعنكم الله وغضب عليكم‏ “ آنحضرت صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا ٹھھر ، عائشھ ! نرم خوئی اختیار کر اور سختی اور بدکلامی سے ھمیشھ پرھیز کر ۔ انھوں نے کھا کیا آپ نے نھیں سنا کھ یھودی کیا کھھ رھے تھے ؟ آنحضرت صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا تم نے نھیں سنا کھ میں نے انھیں کیا جواب دیا ، میں نے ان کی بات انھیں پر لوٹا دی اور میری ان کے بدلے میں دعا قبول کی گئی اور ان کی میرے بارے میں قبول نھیں کی گئی ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 80 Hadith no 6401
Web reference: Sahih Bukhari Volume 8 Book 75 Hadith no 410



@2019 Copyrights: if you have any objection regarding any shared content on pdf9.com please click here.