Search hadith by
Hadith Book
Search Query
Search Language
English Arabic Urdu
Search Type Basic    Case Sensitive
 

Sahih Bukhari

Prayer at Night (Tahajjud)

كتاب التهجد

حَدَّثَنَا مُسْلِمُ بْنُ إِبْرَاهِيمَ، أَخْبَرَنَا شُعْبَةُ، حَدَّثَنَا عَبَّاسٌ الْجُرَيْرِيُّ ـ هُوَ ابْنُ فَرُّوخَ ـ عَنْ أَبِي عُثْمَانَ النَّهْدِيِّ، عَنْ أَبِي هُرَيْرَةَ، رضى الله عنه قَالَ أَوْصَانِي خَلِيلِي بِثَلاَثٍ لاَ أَدَعُهُنَّ حَتَّى أَمُوتَ صَوْمِ ثَلاَثَةِ أَيَّامٍ مِنْ كُلِّ شَهْرٍ، وَصَلاَةِ الضُّحَى، وَنَوْمٍ عَلَى وِتْرٍ‏.‏

Narrated Abu Huraira: My friend (the Prophet) advised me to do three things and I shall not leave them till I die, these are: To fast three days every month, to offer the Duha prayer, and to offer witr before sleeping. ھم سے مسلم بن ابرھیم نے بیان کیا ، انھوں نے کھا ھمیں شعبھ نے خبر دی ، انھوں نے کھا ھم سے عباس جریری نے جو فروخ کے بیٹے تھے بیان کیا ، ان سے ابوعثمان نھدی نے اور ان سے ابوھریرھ رضی اللھ عنھ نے فرمایا کھ مجھے میرے جانی دوست ( نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم ) نے تین چیزوں کی وصیت کی ھے کھ موت سے پھلے ان کو نھ چھوڑوں ۔ ھر مھینھ میں تین دن روزے ۔ چاشت کی نماز اور وتر پڑھ کر سونا ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 19 Hadith no 1178
Web reference: Sahih Bukhari Volume 2 Book 21 Hadith no 274


حَدَّثَنَا عَلِيُّ بْنُ الْجَعْدِ، أَخْبَرَنَا شُعْبَةُ، عَنْ أَنَسِ بْنِ سِيرِينَ، قَالَ سَمِعْتُ أَنَسَ بْنَ مَالِكٍ الأَنْصَارِيَّ، قَالَ قَالَ رَجُلٌ مِنَ الأَنْصَارِ ـ وَكَانَ ضَخْمًا ـ لِلنَّبِيِّ صلى الله عليه وسلم إِنِّي لاَ أَسْتَطِيعُ الصَّلاَةَ مَعَكَ‏.‏ فَصَنَعَ لِلنَّبِيِّ صلى الله عليه وسلم طَعَامًا، فَدَعَاهُ إِلَى بَيْتِهِ، وَنَضَحَ لَهُ طَرَفَ حَصِيرٍ بِمَاءٍ فَصَلَّى عَلَيْهِ رَكْعَتَيْنِ‏.‏ وَقَالَ فُلاَنُ بْنُ فُلاَنِ بْنِ جَارُودٍ لأَنَسٍ ـ رضى الله عنه ـ أَكَانَ النَّبِيُّ صلى الله عليه وسلم يُصَلِّي الضُّحَى فَقَالَ مَا رَأَيْتُهُ صَلَّى غَيْرَ ذَلِكَ الْيَوْمِ‏.‏

Narrated Anas bin Sirin: I heard Anas bin Malik al-Ansari saying, "An Ansari man, who was very fat, said to the Prophet, 'I am unable to present myself for the prayer with you.' He prepared a meal for the Prophet (PBUH) and invited him to his house. He washed one side of a mat with water and the Prophet (PBUH) offered two Rakat on it." So and so, the son of so and so, the son of Al-Jarud asked Anas, "Did the Prophet (PBUH) use to offer the Duha prayer?" Anas replied, "I never saw him praying (the Duha prayer) except on that day." ھم سے علی بن جعد نے بیان کیا کھ ھم کوشعبھ نے خبر دی ، ان سے انس بن سیرین نے بیان کیا کھ میں نے انس بن مالک انصاری رضی اللھ عنھ سے سنا کھ انصار میں سے ایک شخص ( عتبان بن مالک ) نے جو بھت موٹے آدمی تھے ، رسول اللھ صلی اللھ علیھ وسلم سے عرض کیا کھ میں آپ صلی اللھ علیھ وسلم کے ساتھ نماز پڑھنے کی طاقت نھیں رکھتا ( مجھ کو گھر پر نماز پڑھنے کی اجازت دیجئیے تو ) انھوں نے اپنے گھر نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم کے لیے کھانا پکوایا اور آپ صلی اللھ علیھ وسلم کو اپنے گھر بلایا اور ایک چٹائی کے کنارے کو آپ صلی اللھ علیھ وسلم کے لیے پانی سے صاف کیا ، آپ صلی اللھ علیھ وسلم نے اس پر دو رکعت نماز پڑھی ۔ اور فلاں بن فلاں بن جارود نے حضرت انس رضی اللھ عنھ سے پوچھا کھ کیا نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم چاشت کی نماز پڑھا کرتے تھے ؟ تو آپ نے فرمایا کھ میں نے اس روز کے سوا آپ صلی اللھ علیھ وسلم کو کبھی یھ نماز پڑھتے نھیں دیکھا ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 19 Hadith no 1179
Web reference: Sahih Bukhari Volume 2 Book 21 Hadith no 275


حَدَّثَنَا سُلَيْمَانُ بْنُ حَرْبٍ، قَالَ حَدَّثَنَا حَمَّادُ بْنُ زَيْدٍ، عَنْ أَيُّوبَ، عَنْ نَافِعٍ، عَنِ ابْنِ عُمَرَ ـ رضى الله عنهما ـ قَالَ حَفِظْتُ مِنَ النَّبِيِّ صلى الله عليه وسلم عَشْرَ رَكَعَاتٍ رَكْعَتَيْنِ قَبْلَ الظُّهْرِ، وَرَكْعَتَيْنِ بَعْدَهَا، وَرَكْعَتَيْنِ بَعْدَ الْمَغْرِبِ فِي بَيْتِهِ، وَرَكْعَتَيْنِ بَعْدَ الْعِشَاءِ فِي بَيْتِهِ، وَرَكْعَتَيْنِ قَبْلَ صَلاَةِ الصُّبْحِ، وَكَانَتْ سَاعَةً لاَ يُدْخَلُ عَلَى النَّبِيِّ صلى الله عليه وسلم فِيهَا‏.‏ حَدَّثَتْنِي حَفْصَةُ، أَنَّهُ كَانَ إِذَا أَذَّنَ الْمُؤَذِّنُ وَطَلَعَ الْفَجْرُ صَلَّى رَكْعَتَيْنِ‏.‏

Narrated Ibn 'Umar: I remember ten Rakat of Nawafil from the Prophet, two Rakat before the Zuhr prayer and two after it; two Rakat after Maghrib prayer in his house, and two Rakat after 'Isha' prayer in his house, and two Rakat before the Fajr prayer and at that time nobody would enter the house of the Prophet. Hafsa told me that the Prophet (PBUH) used to offer two Rakat after the call maker had made the Adhan and the day had dawned. ھم سے سلیمان بن حرب نے بیان کیا ، انھوں نے کھا کھ ھم سے حماد بن زید نے بیان کیا ، ان سے ایوب سختیانی نے بیان کیا ، ان سے نافع نے ، ان سے عبداللھ بن عمر رضی اللھ عنھما نے کھا کھ مجھے نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم سے دس رکعت سنتیں یاد ھیں ۔ دو رکعت سنت ظھر سے پھلے ، دو رکعت سنت ظھر کے بعد ، دو رکعت سنت مغرب کے بعد اپنے گھر میں ، دو رکعت سنت عشاء کے بعد اپنے گھر میں اور دو رکعت سنت صبح کی نماز سے پھلے اور یھ وھ وقت ھوتا تھا جب آپ صلی اللھ علیھ وسلم کے پاس کوئی نھیں جاتا تھا ۔ مجھ کو ام المؤمنین حضرت حفصھ رضی اللھ عنھا نے بتلایا کھمؤذن جب اذان دیتا اور فجر ھو جاتی تو آپ صلی اللھ علیھ وسلم دو رکعتیں پڑھتے ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 19 Hadith no 1180, 1181
Web reference: Sahih Bukhari Volume 2 Book 21 Hadith no 275


حَدَّثَنَا مُسَدَّدٌ، قَالَ حَدَّثَنَا يَحْيَى، عَنْ شُعْبَةَ، عَنْ إِبْرَاهِيمَ بْنِ مُحَمَّدِ بْنِ الْمُنْتَشِرِ، عَنْ أَبِيهِ، عَنْ عَائِشَةَ ـ رضى الله عنها ـ أَنَّ النَّبِيَّ صلى الله عليه وسلم كَانَ لاَ يَدَعُ أَرْبَعًا قَبْلَ الظُّهْرِ وَرَكْعَتَيْنِ قَبْلَ الْغَدَاةِ‏.‏ تَابَعَهُ ابْنُ أَبِي عَدِيٍّ وَعَمْرٌو عَنْ شُعْبَةَ‏.‏

Narrated Aisha: The Prophet (PBUH) never missed four rak`at before the Zuhr prayer and two rak`at before the Fajr prayer. ھم سے مسدد بن مسرھد نے بیان کیا ، کھا کھ ھم سے یحییٰ بن سعید قطان نے بیان کیا ، کھا کھ ھم سے شعبھ نے ، ان سے ابرھیم بن محمد بن منتشر نے ، ان سے ان کے باپ محمد بن منتشر نے اور ان سے عائشھ رضی اللھ عنھا نے کھ نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم ظھر سے پھلے چار رکعت سنت اور صبح کی نماز سے پھلے دو رکعت سنت نماز پڑھنی نھیں چھوڑتے تھے ۔ یحییٰ کے ساتھ اس حدیث کو ابن ابی عدی اور عمرو بن مرزوق نے بھی شعبھ سے روایت کیا ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 19 Hadith no 1182
Web reference: Sahih Bukhari Volume 2 Book 21 Hadith no 276


حَدَّثَنَا أَبُو مَعْمَرٍ، حَدَّثَنَا عَبْدُ الْوَارِثِ، عَنِ الْحُسَيْنِ، عَنِ ابْنِ بُرَيْدَةَ، قَالَ حَدَّثَنِي عَبْدُ اللَّهِ الْمُزَنِيُّ، عَنِ النَّبِيِّ صلى الله عليه وسلم قَالَ ‏"‏ صَلُّوا قَبْلَ صَلاَةِ الْمَغْرِبِ ‏"‏‏.‏ ـ قَالَ فِي الثَّالِثَةِ ـ لِمَنْ شَاءَ كَرَاهِيَةَ أَنْ يَتَّخِذَهَا النَّاسُ سُنَّةً‏.‏


Chapter: The (optional) salat before the Maghrib prayers

Narrated `Abdullah Al-Muzni: The Prophet (PBUH) said, "Pray before the Maghrib (compulsory) prayer." He (said it thrice) and in the third time, he said, "Whoever wants to offer it can do so." He said so because he did not like the people to take it as a tradition. ھم سے ابو معمر نے بیان کیا ، کھا کھ ھم سے عبدالوارث نے بیان کیا ، ان سے حسین معلم نے ، ان سے عبداللھ بن بریدھ نے ، انھوں نے کھا کھ مجھ سے عبداللھ بن مغفل مزنی رضی اللھ عنھ نے بیان کیا ان سے نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم نے ارشاد فرمایا کھ مغرب کے فرض سے پھلے ( سنت کی دو رکعتیں ) پڑھا کرو ۔ تیسری مرتبھ آپ صلی اللھ علیھ وسلم نے یوں فرمایا کھ جس کا جی چاھے کیونکھ آپ صلی اللھ علیھ وسلم کو یھ بات پسند نھ تھی کھ لوگ اسے لازمی سمجھ بیٹھیں ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 19 Hadith no 1183
Web reference: Sahih Bukhari Volume 2 Book 21 Hadith no 277


حَدَّثَنَا عَبْدُ اللَّهِ بْنُ يَزِيدَ، قَالَ حَدَّثَنَا سَعِيدُ بْنُ أَبِي أَيُّوبَ، قَالَ حَدَّثَنِي يَزِيدُ بْنُ أَبِي حَبِيبٍ، قَالَ سَمِعْتُ مَرْثَدَ بْنَ عَبْدِ اللَّهِ الْيَزَنِيَّ، قَالَ أَتَيْتُ عُقْبَةَ بْنَ عَامِرٍ الْجُهَنِيَّ فَقُلْتُ أَلاَ أُعْجِبُكَ مِنْ أَبِي تَمِيمٍ يَرْكَعُ رَكْعَتَيْنِ قَبْلَ صَلاَةِ الْمَغْرِبِ‏.‏ فَقَالَ عُقْبَةُ إِنَّا كُنَّا نَفْعَلُهُ عَلَى عَهْدِ رَسُولِ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم‏.‏ قُلْتُ فَمَا يَمْنَعُكَ الآنَ قَالَ الشُّغْلُ‏.‏

Narrated Marthad bin `Abdullah Al-Yazani: I went to `Uqba bin 'Amir Al-Juhani and said, "Is it not surprising that Abi Tamim offers two rak`at before the Maghrib prayer?" `Uqba said, "We used to do so in the lifetime of Allah's Messenger (PBUH)." I asked him, "What prevents you from offering it now?" He replied, "Business." ھم سے عبداللھ بن یزید نے بیان کیا ، کھا کھ ھم سے سعید بن ابی ایوب نے بیان کیا ، کھا کھ مجھ سے یزید بن ابی حبیب نے بیان کیا ، انھوں نے کھا کھ میں نے مرثد بن عبداللھ یزنی سے سنا کھ میں عقبھ بن عامر جھنی صحابی رضی اللھ عنھ کے پاس آیا اور عرض کیا آپ کو ابوتمیم عبداللھ بن مالک پر تعجب نھیں آیا کھ وھ مغرب کی نماز فرض سے پھلے دو رکعت نفل پڑھتے ھیں ۔ اس پر عقبھ نے فرمایا کھ ھم بھی رسول اللھ صلی اللھ علیھ وسلم کے زمانھ میں اسے پڑھتے تھے ۔ میں نے کھا پھر اب اس کے چھوڑنے کی کیا وجھ ھے ؟ انھوں نے فرمایا کھ دنیا کے کاروبار مانع ھیں ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 19 Hadith no 1184
Web reference: Sahih Bukhari Volume 2 Book 21 Hadith no 278



@2019 Copyrights: if you have any objection regarding any shared content on pdf9.com please click here.