Search hadith by
Hadith Book
Search Query
Search Language
English Arabic Urdu
Search Type Basic    Case Sensitive
 

Sahih Bukhari

Prayer at Night (Tahajjud)

كتاب التهجد

حَدَّثَنَا عَبْدُ اللَّهِ بْنُ مَسْلَمَةَ، عَنْ مَالِكٍ، عَنِ ابْنِ شِهَابٍ، عَنْ أَبِي سَلَمَةَ، وَأَبِي عَبْدِ اللَّهِ الأَغَرِّ، عَنْ أَبِي هُرَيْرَةَ ـ رضى الله عنه ـ أَنَّ رَسُولَ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم قَالَ ‏"‏ يَنْزِلُ رَبُّنَا تَبَارَكَ وَتَعَالَى كُلَّ لَيْلَةٍ إِلَى السَّمَاءِ الدُّنْيَا حِينَ يَبْقَى ثُلُثُ اللَّيْلِ الآخِرُ يَقُولُ مَنْ يَدْعُونِي فَأَسْتَجِيبَ لَهُ مَنْ يَسْأَلُنِي فَأُعْطِيَهُ مَنْ يَسْتَغْفِرُنِي فَأَغْفِرَ لَهُ ‏"‏‏.‏

Narrated Abu Huraira: Allah's Messenger (PBUH) (p.b.u.h) said, "Our Lord, the Blessed, the Superior, comes every night down on the nearest Heaven to us when the last third of the night remains, saying: "Is there anyone to invoke Me, so that I may respond to invocation? Is there anyone to ask Me, so that I may grant him his request? Is there anyone seeking My forgiveness, so that I may forgive him?" ھم سے عبداللھ بن مسلمھ قعنبی نے بیان کیا ، ان سے امام مالک رحمھ اللھ نے ، ان نے ابن شھاب نے ، ان سے ابوسلمھ عبدالرحمٰن اور ابوعبداللھ اغر نے اور ان دونوں حضرات سے ابوھریرھ رضی اللھ عنھ نے کھ رسول اللھ صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا کھ ھمارا پروردگار بلند برکت والا ھے ھر رات کو اس وقت آسمان دنیا پر آتا ھے جب رات کا آخری تھائی حصھ رھ جاتا ھے ۔ وھ کھتا ھے کوئی مجھ سے دعا کرنے والا ھے کھ میں اس کی دعا قبول کروں ، کوئی مجھ سے مانگنے والا ھے کھ میں اسے دوں کوئی مجھ سے بخشش طلب کرنے والا ھے کھ میں اس کو بخش دوں ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 19 Hadith no 1145
Web reference: Sahih Bukhari Volume 2 Book 21 Hadith no 246


حَدَّثَنَا أَبُو الْوَلِيدِ، حَدَّثَنَا شُعْبَةُ،‏.‏ وَحَدَّثَنِي سُلَيْمَانُ، قَالَ حَدَّثَنَا شُعْبَةُ، عَنْ أَبِي إِسْحَاقَ، عَنِ الأَسْوَدِ، قَالَ سَأَلْتُ عَائِشَةَ ـ رضى الله عنها ـ كَيْفَ صَلاَةُ النَّبِيِّ صلى الله عليه وسلم بِاللَّيْلِ قَالَتْ كَانَ يَنَامُ أَوَّلَهُ وَيَقُومُ آخِرَهُ، فَيُصَلِّي ثُمَّ يَرْجِعُ إِلَى فِرَاشِهِ، فَإِذَا أَذَّنَ الْمُؤَذِّنُ وَثَبَ، فَإِنْ كَانَ بِهِ حَاجَةٌ اغْتَسَلَ، وَإِلاَّ تَوَضَّأَ وَخَرَجَ‏.‏

Narrated Al-Aswad: I asked `Aisha "How is the night prayer of the Prophet?" She replied, "He used to sleep early at night, and get up in its last part to pray, and then return to his bed. When the Mu'adh-dhin pronounced the Adhan, he would get up. If he was in need of a bath he would take it; otherwise he would perform ablution and then go out (for the prayer)." ھم سے ابو الولید نے بیان کیا ، کھا کھ ھم سے شعبھ نے بیان کیا ، ( دوسری سند ) اور مجھ سے سلیمان بن حرب نے بیان کیا ، انھوں نے کھا کھ ھم سے شعبھ نے بیان کیا ، ان سے ابواسحاق عمرو بن عبداللھ نے ، ان سے اسود بن یزید نے ، انھوں نے بتلایا کھ میں نے حضرت عائشھ صدیقھ رضی اللھ عنھا سے پوچھا کھ نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم رات میں نماز کیونکر پڑھتے تھے ؟ آپ نے بتلایا کھ شروع رات میں سو رھتے اور آخر رات میں بیدار ھو کر تھجد کی نماز پڑھتے ۔ اس کے بعد بستر پر آ جاتے اور جب مؤذن اذان دیتا تو جلدی سے اٹھ بیٹھتے ۔ اگر غسل کی ضرورت ھوتی تو غسل کرتے ورنھ وضو کر کے باھر تشریف لے جاتے ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 19 Hadith no 1146
Web reference: Sahih Bukhari Volume 2 Book 21 Hadith no 247


حَدَّثَنَا عَبْدُ اللَّهِ بْنُ يُوسُفَ، قَالَ أَخْبَرَنَا مَالِكٌ، عَنْ سَعِيدِ بْنِ أَبِي سَعِيدٍ الْمَقْبُرِيِّ، عَنْ أَبِي سَلَمَةَ بْنِ عَبْدِ الرَّحْمَنِ، أَنَّهُ أَخْبَرَهُ أَنَّهُ، سَأَلَ عَائِشَةَ ـ رضى الله عنها ـ كَيْفَ كَانَتْ صَلاَةُ رَسُولِ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم فِي رَمَضَانَ فَقَالَتْ مَا كَانَ رَسُولُ اللَّهِ صلى الله عليه وسلم يَزِيدُ فِي رَمَضَانَ وَلاَ فِي غَيْرِهِ عَلَى إِحْدَى عَشْرَةَ رَكْعَةً، يُصَلِّي أَرْبَعًا فَلاَ تَسَلْ عَنْ حُسْنِهِنَّ وَطُولِهِنَّ، ثُمَّ يُصَلِّي أَرْبَعًا فَلاَ تَسَلْ عَنْ حُسْنِهِنَّ وَطُولِهِنَّ، ثُمَّ يُصَلِّي ثَلاَثًا، قَالَتْ عَائِشَةُ فَقُلْتُ يَا رَسُولَ اللَّهِ أَتَنَامُ قَبْلَ أَنْ تُوتِرَ‏.‏ فَقَالَ ‏"‏ يَا عَائِشَةُ، إِنَّ عَيْنَىَّ تَنَامَانِ وَلاَ يَنَامُ قَلْبِي ‏"‏‏.‏


Chapter: The Salat (prayer) of the Prophet (pbuh) at night in Ramadan and (in) other months

Narrated Abu Salma bin `Abdur Rahman: I asked `Aisha, "How is the prayer of Allah's Messenger (PBUH) during the month of Ramadan." She said, "Allah's Messenger (PBUH) never exceeded eleven rak`at in Ramadan or in other months; he used to offer four rak`at-- do not ask me about their beauty and length, then four rak`at, do not ask me about their beauty and length, and then three rak`at." Aisha further said, "I said, 'O Allah's Messenger (PBUH)! Do you sleep before offering the witr prayer?' He replied, 'O `Aisha! My eyes sleep but my heart remains awake'!" ھم سے عبداللھ بن یوسف تنیسی نے بیان کیا ، انھوں نے کھا کھ ھمیں امام مالک رحمھ اللھ نے خبر دی ، انھیں سعید بن ابوسعید مقبری نے خبر دی ، انھیں ابوسلمھ بن عبدالرحمٰن نے خبر دی کھ ام المؤمنین حضرت عائشھ صدیقھ رضی اللھ عنھا سے انھوں نے پوچھا کھ نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم رمضان میں ( رات کو ) کتنی رکعتیں پڑھتے تھے ۔ آپ نے جواب دیا کھ رسول اللھ صلی اللھ علیھ وسلم ( رات میں ) گیارھ رکعتوں سے زیادھ نھیں پڑھتے تھے ۔ خواھ رمضان کا مھینھ ھوتا یا کوئی اور ۔ پھلے آپ صلی اللھ علیھ وسلم چار رکعت پڑھتے ۔ ان کی خوبی اور لمبائی کا کیا پوچھنا ۔ پھر آپ صلی اللھ علیھ وسلم چار رکعت اور پڑھتے ان کی خوبی اور لمبائی کا کیا پوچھنا ۔ پھر تین رکعتیں پڑھتے ۔ عائشھ رضی اللھ عنھا نے فرمایا کھ میں نے عرض کیا یا رسول اللھ ! آپ وتر پڑھنے سے پھلے ھی سو جاتے ھیں ؟ اس پر آپ صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا کھ عائشھ ! میری آنکھیں سوتی ھیں لیکن میرا دل نھیں سوتا ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 19 Hadith no 1147
Web reference: Sahih Bukhari Volume 2 Book 21 Hadith no 248


حَدَّثَنَا مُحَمَّدُ بْنُ الْمُثَنَّى، حَدَّثَنَا يَحْيَى بْنُ سَعِيدٍ، عَنْ هِشَامٍ، قَالَ أَخْبَرَنِي أَبِي، عَنْ عَائِشَةَ ـ رضى الله عنها ـ قَالَتْ مَا رَأَيْتُ النَّبِيَّ صلى الله عليه وسلم يَقْرَأُ فِي شَىْءٍ مِنْ صَلاَةِ اللَّيْلِ جَالِسًا، حَتَّى إِذَا كَبِرَ قَرَأَ جَالِسًا، فَإِذَا بَقِيَ عَلَيْهِ مِنَ السُّورَةِ ثَلاَثُونَ أَوْ أَرْبَعُونَ آيَةً قَامَ فَقَرَأَهُنَّ ثُمَّ رَكَعَ‏.‏

Narrated `Aisha: I did not see the Prophet (PBUH) reciting (the Qur'an) in the night prayer while sitting except when he became old; when he used to recite while sitting, and when thirty or forty verses remained from the Sura, he would get up and recite them and then bow. ھم سے محمد بن مثنی نے بیان کیا ، انھوں نے کھا کھ ھم سے یحییٰ بن سعید قطان نے بیان کیا اور انھوں نے کھا کھ ھم سے ھشام بن عروھ نے بیان کیا کھ مجھے میرے باپ عروھ نے خبر دی کھ حضرت عائشھ صدیقھ رضی اللھ عنھا نے بتلایا کھ میں نے نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم کو رات کی کسی نماز میں بیٹھ کر قرآن پڑھتے نھیں دیکھا ۔ یھاں تک کھ آپ صلی اللھ علیھ وسلم بوڑھے ھو گئے تو بیٹھ کر قرآن پڑھتے تھے لیکن جب تیس چالیس آیتیں رھ جاتیں تو کھڑے ھو جاتے پھر اس کو پڑھ کر رکوع کرتے تھے ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 19 Hadith no 1148
Web reference: Sahih Bukhari Volume 2 Book 21 Hadith no 249


حَدَّثَنَا إِسْحَاقُ بْنُ نَصْرٍ، حَدَّثَنَا أَبُو أُسَامَةَ، عَنْ أَبِي حَيَّانَ، عَنْ أَبِي زُرْعَةَ، عَنْ أَبِي هُرَيْرَةَ ـ رضى الله عنه ـ أَنَّ النَّبِيَّ صلى الله عليه وسلم قَالَ لِبِلاَلٍ عِنْدَ صَلاَةِ الْفَجْرِ ‏"‏ يَا بِلاَلُ حَدِّثْنِي بِأَرْجَى عَمَلٍ عَمِلْتَهُ فِي الإِسْلاَمِ، فَإِنِّي سَمِعْتُ دَفَّ نَعْلَيْكَ بَيْنَ يَدَىَّ فِي الْجَنَّةِ ‏"‏‏.‏ قَالَ مَا عَمِلْتُ عَمَلاً أَرْجَى عِنْدِي أَنِّي لَمْ أَتَطَهَّرْ طُهُورًا فِي سَاعَةِ لَيْلٍ أَوْ نَهَارٍ إِلاَّ صَلَّيْتُ بِذَلِكَ الطُّهُورِ مَا كُتِبَ لِي أَنْ أُصَلِّيَ‏.‏ قَالَ أَبُو عَبْدِ اللَّهِ دَفَّ نَعْلَيْكَ يَعْنِي تَحْرِيكَ‏.‏


Chapter: The Superiority of remaining with ablution during the day and night

Narrated Abu Huraira: At the time of the Fajr prayer the Prophet (PBUH) asked Bilal, "Tell me of the best deed you did after embracing Islam, for I heard your footsteps in front of me in Paradise." Bilal replied, "I did not do anything worth mentioning except that whenever I performed ablution during the day or night, I prayed after that ablution as much as was written for me." ھم سے اسحاق بن نصر نے بیان کیا ، انھوں نے کھا کھ ھم سے ابواسامھ حماد بن اسابھ نے بیان کیا ، ان سے ابو حیان یحییٰ بن سعید نے بیان کیا ، ان سے ابو زرعھ نے بیان کیا اور ان سے حضرت ابوھریرھ رضی اللھ عنھ نے کھ نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم نے حضرت بلال رضی اللھ عنھ سے فجر کے وقت پوچھا کھ اے بلال ! مجھے اپنا سب سے زیادھ امید والا نیک کام بتاؤ جسے تم نے اسلام لانے کے بعد کیا ھے کیونکھ میں نے جنت میں اپنے آگے تمھارے جوتوں کی چاپ سنی ھے ۔ حضرت بلال رضی اللھ عنھ نے عرض کیا میں نے تو اپنے نزدیک اس سے زیادھ امید کا کوئی کام نھیں کیا کھ جب میں نے رات یا دن میں کسی وقت بھی وضو کیا تو میں اس وضو سے نفل نماز پڑھتا رھتا جتنی میری تقدیر لکھی گئی تھی ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 19 Hadith no 1149
Web reference: Sahih Bukhari Volume 2 Book 21 Hadith no 250


حَدَّثَنَا أَبُو مَعْمَرٍ، حَدَّثَنَا عَبْدُ الْوَارِثِ، عَنْ عَبْدِ الْعَزِيزِ بْنِ صُهَيْبٍ، عَنْ أَنَسِ بْنِ مَالِكٍ ـ رضى الله عنه ـ قَالَ دَخَلَ النَّبِيُّ صلى الله عليه وسلم فَإِذَا حَبْلٌ مَمْدُودٌ بَيْنَ السَّارِيَتَيْنِ فَقَالَ ‏"‏ مَا هَذَا الْحَبْلُ ‏"‏‏.‏ قَالُوا هَذَا حَبْلٌ لِزَيْنَبَ فَإِذَا فَتَرَتْ تَعَلَّقَتْ‏.‏ فَقَالَ النَّبِيُّ صلى الله عليه وسلم ‏"‏ لاَ، حُلُّوهُ، لِيُصَلِّ أَحَدُكُمْ نَشَاطَهُ، فَإِذَا فَتَرَ فَلْيَقْعُدْ ‏"‏‏.‏


Chapter: It is disliked to exaggerate in matters of worship

Narrated Anas bin Malik Once the Prophet (p.b.u.h) entered the Mosque and saw a rope hanging in between its two pillars. He said, "What is this rope?" The people said, "This rope is for Zainab who, when she feels tired, holds it (to keep standing for the prayer.)" The Prophet (PBUH) said, "Don't use it. Remove the rope. You should pray as long as you feel active, and when you get tired, sit down." ھم سے ابو معمرعبداللھ بن عمرو نے بیان کیا ، کھا کھ ھم سے عبدالوارث بن سعد نے بیان کیا ، کھا کھ ھم سے عبد العزیز بن صھیب نے بیان کیا ، ان سے انس بن مالک رضی اللھ عنھ نے کھ نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم مسجد میں تشریف لے گئے ۔ آپ صلی اللھ علیھ وسلم کی نظر ایک رسی پر پڑی جو دو ستونوں کے درمیان تنی ھوئی تھی ۔ دریافت فرمایا کھ یھ رسی کیسی ھے ؟ لوگوں نے عرض کی کھ یھ حضرت زینب رضی اللھ عنھا نے باندھی ھے جب وھ ( نماز میں کھڑی کھڑی ) تھک جاتی ھیں تو اس سے لٹکی رھتی ھیں ۔ نبی کریم صلی اللھ علیھ وسلم نے فرمایا کھ نھیں یھ رسی نھیں ھونی چاھیے اسے کھول ڈالو ، تم میں ھر شخص کو چاھیے جب تک دل لگے نماز پڑھے ، تھک جائے تو بیٹھ جائے ۔

Share »

Book reference: Sahih Bukhari Book 19 Hadith no 1150
Web reference: Sahih Bukhari Volume 2 Book 21 Hadith no 251



@2019 Copyrights: if you have any objection regarding any shared content on pdf9.com please click here.